پٹرول-ڈیزل کی قیمتوں میں کوئی راحت نہیں، آج پھر 35-35 پیسے فی لیٹر کا اضافہ

ہندوستان کی سرخیل آئل مارکیٹنگ کمپنی انڈین آئل کارپوریشن کے مطابق دہلی میں پٹرول 107.59 روپے فی لیٹر اور ڈیزل 96.32 روپے فی لیٹر تک پہنچ گیا۔

پٹرول ڈیزل / تصویر یو این آئی
پٹرول ڈیزل / تصویر یو این آئی
user

یو این آئی

نئی دہلی: بین الاقوامی بازار میں خام تیل کی قیمتوں میں اضافہ کی وجہ سے اتوار کو مسلسل پانچویں دن گھریلو پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں 35-35 پیسے فی لیٹر کا اضافہ کیا گیا۔ آج کے اضافے کے بعد دارالحکومت دہلی میں پٹرول 107.59 روپے فی لیٹر اور ڈیزل 96.32 روپے فی لیٹر ہمہ وقتی ریکارڈ سطح پر پہنچ گیا۔

بدھ کے روز ان دونوں ایندھنوں کی قیمتوں میں 35 ، 35 پیسے فی لیٹر کا اضافہ کیا گیا۔ آج کے اضافے کے بعد ممبئی میں پٹرول 113.46 روپے اور ڈیزل 104.38 روپے فی لیٹر پر پہنچ گیا۔ مدھیہ پردیش کی راجدھانی بھوپال میں سب سے زیادہ مہنگا پٹرول 116.26 روپے فی لیٹر اور ڈیزل 105.64 روپے فی لیٹر، پٹنہ میں پٹرول 111.24 روپے اور ڈیزل 102.93 روپے فی لیٹر، بنگلور میں پیٹرول 111.34 روپے اور ڈیزل 103.23 روپے فی لیٹر ہے، رانچی میں پٹرول کے ساتھ ڈیزل نے بھی سنچری بنائی ہے۔ اب دونوں کی قیمتوں میں صرف 26 پیسے کا فرق ہے۔ یہاں پٹرول کی قیمت 101.89 روپے اور ڈیزل کی قیمت 101.63 روپے فی لیٹر ہے۔ نوئیڈا، دہلی این سی آر میں پٹرول 104.76 روپے اور ڈیزل 96.47 روپے فی لیٹر ہے۔


ملک کے بیشتر بڑے شہروں میں پٹرول کی قیمت 100 روپے فی لیٹر سے تجاوز کرچکی ہے اور ڈیزل بھی سنچری کی طرف بڑھ رہا ہے۔ اس مہینے میں اب تک ان دونوں کی قیمتیں 24 میں 19 دن بڑھ چکی ہیں۔ اس ماہ اب تک پٹرول 5.95 روپے فی لیٹر اور ڈیزل 6.55 روپے فی لیٹر مہنگا ہو چکا ہے۔ بین الاقوامی مارکیٹ میں خام تیل اب بھی اونچا رہا۔ ہفتے کے آخر میں گزشتہ روز امریکی مارکیٹ میں تیزی رہی۔ برینٹ کروڈ کی قیمت 0.92 ڈالر اضافے سے 85.53 ڈالر فی بیرل اور یو ایس کروڈ کی قیمت 1.09 ڈالر اضافے سے 82.50 ڈالر فی بیرل ہوگئی۔ پچھلے ہفتے بھی ان دونوں میں تقریباً تین فیصد کا اضافہ دیکھا گیا تھا۔

ملک کی سرخیل آئل مارکیٹنگ کمپنی انڈین آئل کارپوریشن کے مطابق دہلی میں پٹرول 107.59 روپے فی لیٹر اور ڈیزل 96.32 روپے فی لیٹر تک پہنچ گیا۔ پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں کا روزانہ جائزہ لیا جاتا ہے اور اس کی بنیاد پر ہر روز صبح 6 بجے سے نئی قیمتوں کا نفاذ کیا جاتا ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔