دہلی: مخدوش عمارت میں ہو رہا مریضوں کا علاج، عآپ نے بی جے پی لیڈروں کے خلاف درج کرائی شکایت

کالکا جی رکن اسمبلی آتشی نے ٹوئٹر پر اسپتال کی ایک ویڈیو پوسٹ کی تھی اور کہا تھا کہ مریضوں کا مبینہ طور پر ایک خطرناک مخدوش عمارت میں علاج کیا جا رہا ہے جو کسی بھی دن گر سکتی ہے۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

قومی آوازبیورو

عام آدمی پارٹی نے بی جے پی لیڈروں کے خلاف شمالی ایم سی ڈی کے راجن بابو اسپتال کی مبینہ مخدوش عمارت کے باوجود مریضوں کا علاج جاری رکھنے کو لے کر شکایت درج کرائی ہے۔ عآپ کے شمالی ایم سی ڈی اپوزیشن لیڈر وکاس گویل نے کہا کہ ’’شمالی ایم سی ڈی کے راجن بابو اسپتال کی بگڑتی حالت کے باوجود مریضوں کا علاج جاری رکھنے کو لے کر بی جے پی لیڈروں کے خلاف مکھرجی نگر تھانہ میں شکایت درج کرائی گئی ہے۔ ساتھ ہی مخدوش ڈھانچے کو فوراً خالی کرانے کا مطالبہ کیا گیا ہے۔‘‘

واضح رہے کہ جمعرات کی صبح کالکاجی رکن اسمبلی آتشی نے ٹوئٹر پر اسپتال کی ایک ویڈیو اور کچھ تصویریں پوسٹ کی تھیں اور کہا تھا کہ مریضوں کا مبینہ طور پر ایک خطرناک مخدوش عمارت میں علاج کیا جا رہا ہے جو کسی بھی دن منہدم ہو سکتی ہے۔ آتشی اور گویل دونوں نے دعویٰ کیا کہ پورے اسپتال میں لکھا ہے کہ یہ ڈھانچہ خطرناک ہے۔ جائزہ کے بعد گویل نے کہا کہ ’’عمارت کے غیر محفوظ سرٹیفائیڈ ہونے کے باوجود لگاتار علاج جاری رکھنا نہ صرف کارپوریشن کے ضابطوں کی نظراندازی ہے، بلکہ مریضوں اور ملازمین کی زندگی کو بھی خطرے میں ڈال رہا ہے۔‘‘


آتشی نے جمعرات کی صبح کہا کہ ایسا لگتا ہے جیسے بی جے پی کی قیادت والی ایم سی ڈی نے دہلی کے لوگوں کو مرنے کے لیے چھوڑ دیا ہے۔ اس کے جواب میں بی جے پی ترجمان پروین شنکر کپور نے کہا کہ اسپتال میں مریض اپنے علاج سے مطمئن ہیں، جب کہ بی جے پی کے دیگر اراکین نے دہلی حکومت کے محلہ کلینک میں سے ایک کا اسکرین گریب مخدوش حالت میں پوسٹ کیا ہے۔

شمالی دہلی میونسپل کارپوریشن (این ڈی ایم سی) کے تحت آنے والے جی ٹی بی نگر میں راجن بابو انسٹی ٹیوٹ آف پلمونری میڈیسن اینڈ ٹیوبرکلوسس (آر بی آئی پی ایم ٹی) کو 2017 میں ایک ملٹی اسپیشلٹی اسپتال کی شکل میں تیار کیا گیا تھا۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔