بی جے پی قائدین دن بہ دن امیر ہو رہے ہیں اور ایم سی ڈی اسکول و اسپتال خراب: عآپ

عآپ لیڈر درگیش پاٹھک کا کہنا ہے کہ بی جے پی کے زیر اقتدار ایم سی ڈی نے 700 اسکولوں کے ساڑھے 3 لاکھ بچوں کو ابھی تک کتابیں فراہم نہیں کی ہیں۔

عآپ لیڈر درگیش پاٹھک
عآپ لیڈر درگیش پاٹھک
user

پریس ریلیز

نئی دہلی: عام آدمی پارٹی (عآپ) کے سینئر رہنما اور ایم سی ڈی انچارج درگیش پاٹھک نے کہا کہ بھارتیہ جنتا پارٹی کے زیر اقتدار ایم سی ڈی نے اپنے 700 اسکولوں میں زیر تعلیم تقریبا 3.53 لاکھ بچوں کو کتابیں فراہم نہیں کی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ بچے کتاب کے بغیر کیسے پڑھیں گے؟ بی جے پی کے زیر اقتدار ایم سی ڈی اپنے اسکولوں میں پڑھنے والے تقریباً ساڑھے تین لاکھ بچوں کی زندگیوں کے ساتھ کھیل رہی ہے۔ ایک طرف، بی جے پی قائدین مزید دولت مند ہوتے جارہے ہیں اور دوسری طرف، بی جے پی کے زیر اقتدار ایم سی ڈی کے اسکول اور اسپتال دن بدن خراب ہوتے جارہے ہیں۔ میں بی جے پی کے ریاستی صدر آدیش گپتا سے اپیل کرتا ہوں کہ وہ بچوں کی تعلیم کے ساتھ سیاست نہ کریں اور ایم سی ڈی کو ہدایت کریں کہ وہ کتاب فوری طور پر مہیا کریں تاکہ بچوں کا مستقبل تباہ ہونے سے بچایا جاسکے۔

پارٹی ہیڈ کوارٹر میں منعقدہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے، عام آدمی پارٹی کے سینئر رہنما، درگیش پاٹھک نے کہا کہ کورونا کی وبا کے اس دور میں سب پریشان ہیں اور اس وبا کی وجہ سے سب سے زیادہ نقصان اسکول کے طلباء کو ہوا ہے۔ جبکہ ایک طرف، کورونا وبا کے اس دور میں تمام حکومتیں، خواہ وہ دہلی کی حکومت ہو یا کسی اور ریاست کی حکومت، اس بات کو یقینی بنانے کی کوشش کر رہی ہے کہ اس تباہی کے دور میں بچوں کی تعلیم کو کوئی نقصان نہ ہو، بچوں کا مستقبل خراب نہ ہو، لیکن ایسی صورتحال میں بھی، بی جے پی کے زیر اقتدار دہلی کی میونسپل کارپوریشن نے اپنے اسکولوں میں تعلیم حاصل کرنے والے بچوں کے ساتھ ایک بہت بڑا گناہ کیا ہے۔ بی جے پی کے زیر اقتدار میونسپل کارپوریشن نے اس فہرست میں ایک اور عنوان شامل کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ جیسا کہ سب جانتے ہیں، دہلی میں پرائمری تعلیم کی ذمہ داری بی جے پی کے زیر اقتدار میونسپل کارپوریشن پر عائد ہوتی ہے۔ دہلی کی میونسپل کارپوریشن میں تعلیم حاصل کرنے والے چھوٹے بچوں کی تعلیم کی ذمہ داری بی جے پی کے میونسپل کارپوریشن کے کندھوں پر ہے۔ لیکن وہ اپنی ذمہ داری نبھانے میں مکمل طور پر ناکام ثابت ہوا ہے۔ بی جے پی کے زیر اقتدار میونسپل کارپوریشن کے تحت ہزاروں پرائمری اسکول آتے ہیں، جن میں سے تقریبا 700 اسکول شمالی دہلی میونسپل کارپوریشن کے تحت آتے ہیں۔ ان 700 اسکولوں میں دہلی کے قریب ساڑھے 3 لاکھ بچے تعلیم حاصل کرتے ہیں۔

درگیش پاٹھک نے بتایا کہ ان بچوں کی نئے سال کی تعلیم اپریل کے مہینے سے شروع ہوتی ہے۔ اکتوبر کا مہینہ چل رہا ہے، قریب کئی ماہ گزر چکے ہیں، لیکن اب تک بی جے پی کے زیر اقتدار شمالی میونسپل کارپوریشن نے ان ساڑھے تین لاکھ بچوں کو کتابیں فراہم نہیں کیں۔ درگیش پاٹھک نے کہا کہ سب سے پہلے حکومتیں کوشش کر رہی ہیں کہ بچوں کو آن لائن کلاسوں کے ذریعے تعلیم دی جائے تاکہ ان کا سال ضائع نہ ہو، بلکہ آن لائن کلاس کے لئے بھی کتابیں بہت اہم ہیں۔ انہوں نے کہا کہ وہ بچے میونسپل کارپوریشن دہلی میں تعلیم حاصل کرتے ہیں، جن کے والدین انتہائی غریب اور مزدور طبقے سے ہیں۔ سب سے پہلے تو ان بچوں کو آن لائن کلاس کے لئے ہائی ٹیک موبائل اور لیپ ٹاپ وغیرہ مہیا کرنا اپنے آپ میں ایک بہت بڑا چیلنج ہے اور اگر بچوں کے پاس اس پر بھی ان کے پاس کتابیں نہیں ہیں تو پھر بچے آن لائن کلاس میں تعلیم کیسے حاصل کریں گے۔

بھارتیہ جنتا پارٹی پر الزام لگاتے ہوئے درگیش پاٹھک نے کہا کہ بی جے پی دہلی کے میونسپل کارپوریشن کے اسکولوں میں زیر تعلیم 3.5 لاکھ بچوں کے مستقبل کے ساتھ کھیل رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ بی جے پی کے زیر اقتدار میونسپل کارپوریشن پہلے ہی اپنی ہر ذمہ داری نبھانے میں پوری طرح سے ناکام ثابت ہوئی ہے۔ بی جے پی کے زیر اقتدار میونسپل کارپوریشن ڈاکٹروں کی تنخواہوں، اساتذہ کی تنخواہوں، صفائی کارکنوں کی تنخواہوں، دہلی کی صفائی ستھرائی، دہلی کے آس پاس کوڑے کے پہاڑوں کے لئے کچھ نہیں کررہی ہے اور اب اس کے بعد ساڑھے تین لاکھ بچے انھیں بربادی کے دہانے پر لے جانے میں مصروف ہیں۔ انہوں نے کہا کہ بی جے پی کے کونسلرز دن بدن زیادہ سے زیادہ امیر ہوتے جارہے ہیں، بی جے پی قائدین دن بدن زیادہ سے زیادہ امیر ہوتے جارہے ہیں، لیکن بی جے پی کے زیر اقتدار میونسپل کارپوریشن کے تحت اسپتالوں، اسکولوں کی حالت دن بدن بڑھتی جارہی ہے۔ وہاں کام کرنے والے ملازمین، صفائی ستھرائی کے کارکنوں کی حالت دن بدن خراب ہوتی جارہی ہے۔

میڈیا کے توسط سے دہلی بی جے پی کے ریاستی صدر آدیش گپتا سے اپیل کرتے ہوئے درگیش پاٹھک نے کہا کہ میں درخواست کرتا ہوں کہ بی جے پی کو ان معصوم بچوں کے مستقبل کے ساتھ اس طرح کھیلنا نہیں چاہئے۔ بی جے پی کے زیر اقتدار میونسپل کارپوریشن کا سالانہ بجٹ 20000 کروڑ روپے ہے۔ اس کے بعد بھی، آپ میونسپلٹی اسکول میں زیر تعلیم معصوم بچوں کو کتابیں مہیا نہیں کرسکتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ میں آدیش گپتا سے اپیل کرتا ہوں کہ بی جے پی کے زیر اقتدار میونسپل کارپوریشن میں زیر تعلیم ان 3،50،000 بچوں کو کتابیں فوری طور پر فراہم کی جائیں تاکہ یہ بچے اپنی تعلیم کا آغاز کرسکیں اور ان بچوں کا مستقبل تباہ ہونے سے بچ سکے۔

پسندیدہ ترین
next