امریکا میں ایک بار پھر اندھا دھند فائرنگ سے 9 افراد ہلاک، کیلیفورنیا میں چینی سال نو کا جشن ماتم میں تبدیل

بی بی سی کی خبر کے مطابق پولیس نے ہلاکتوں کی تصدیق کرتے ہوئے واقعے میں زخمی ہونے والوں کی تعداد ظاہر نہیں کی ہے اور نہ ہی کوئی گرفتاری کی ہے۔

<div class="paragraphs"><p>تصویر علامتی آئی اے این ایس</p></div>

تصویر علامتی آئی اے این ایس

user

قومی آوازبیورو

امریکہ کے کیلیفورنیا کے مونٹیری پارک میں گزشرہ رات ہوئی فائرنگ میں کم از کم نو افراد ہلاک ہو گئے ہیں۔ چینی نئے سال کے موقع پر مونٹیری پارک میں ہزاروں لوگ قمری نئے سال کے تہوار کے لیے جمع ہوئے تھے۔ لاس اینجلس کاؤنٹی شیرف کے محکمے نے کہا کہ وہ اس واقعے میں ملوث مرد مشتبہ شخص کی تلاش کر رہے ہیں۔

اطلاعات کے مطابق فائرنگ کا واقعہ لاس اینجلس کے مونٹیری پارک میں رات 10 بجکر 20 منٹ پر پیش آیا۔ بی بی سی کی خبر کے مطابق، پولیس نے ہلاکتوں کی تصدیق کرتے ہوئے واقعے میں زخمی ہونے والوں کی تعداد ظاہر نہیں کی ہے اور نہ ہی کوئی گرفتاری کی ہے۔ جبکہ لاس اینجلس کاؤنٹی کے شیرف ڈیپارٹمنٹ نے کہا ہے کہ فائرنگ کے واقعے کے پیچھے ایک مرد مشتبہ شخص ہے۔


لاس اینجلس سے تقریباً 13 کلومیٹر مشرق میں واقع اس شہر کے بارے میں کہا جاتا ہے کہ یہاں ایشیائی آبادی بہت زیادہ ہے۔ لاس اینجلس ٹائمز نے ایک عینی شاہد کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ تین آدمی دوڑتے ہوئے اس کے ریسٹورنٹ میں آئے اور اسے دروازہ بند کرنے کو کہا، کیونکہ ایک مشین گن کے ساتھ ایک شخص علاقے میں گھوم رہا تھا اور لوگوں پر فائرنگ کر رہا تھا۔

پورے ملک کو ہلا کر رکھ دینے والے اس واقعے کے کچھ ہی دیر بعد پورا علاقہ پولیس کی گاڑیوں کے سائرن کی آواز سے گونج اٹھا۔ اطلاع ملنے پر مونٹیری پارک کے شیرف آفس کے تمام افسران بھی موقع پر پہنچ گئے۔ پولیس کے خصوصی دستے نے حملہ آور کا سراغ لگانے کے لیے علاقے میں بھرپور آپریشن شروع کر دیا۔ تاہم دیر شام تک حملہ آور کی گرفتاری کی کوئی خبر نہیں ہے۔

Follow us: Facebook, Twitter, Google News

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔