کانپور میں زیکا وائرس کا پھیلاؤ جاری، 16 نئے مریض، حالات کا جائزہ لیں گے یوگی

زیکا وائرس کی کوئی مخصوص علامات نہیں ہیں اور مریض کو ڈینگو کی طرح ہی محسوس ہوتا ہے۔ اس سے متاثر ہونے پر بخار آنا، بدن پر چکتے پڑ جانا اور جوڑوں میں درد محسوس ہوتا ہے۔

زیکا وائرس، تصوئر آئی اے این ایس
زیکا وائرس، تصوئر آئی اے این ایس
user

قومی آوازبیورو

کانپور: اتر پردیش کے صنعتی شہر کانپور میں زیکا وائرس کا پھیلاؤ لگاتار جاری ہے۔ آج تک کی رپورٹ کے مطابق ضلع میں 16 نئے معاملے رپورٹ ہوئے ہیں، جبکہ زیکا وائرس کے مجموعی کیسز کی تعداد 105 ہو چکی ہے۔ نئے مریضوں میں دو حاملہ خواتین بھی شامل ہیں۔

زیکا وائرس کی وبا کے اس قدر پھیلاؤ کے پیش نظر انتظامیہ متحرک ہے جبکہ حالات کا جائزہ لینے کے لئے وزیر اعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ آج کانپور کا دورہ کرنے جا رہے ہیں۔ رپورٹ کے مطابق وزیر اعلیٰ یوگی کانپور ڈیولپمنٹ اتھارٹی آڈیٹوریم میں ضلع کے صحت افسران کے ساتھ میٹنگ کریں گے۔ اس میٹنگ کے دوران زیکا وائرس پر قابو پانے کی تیاریوں کا جائزہ لیا جائے گا۔


اس کے علاوہ وزیر اعلیٰ یوگی زیکا سے متاثرہ علاقوں کا بھی دورہ کریں گے اور انفیکشن کے متاثرین سے ملاقات بھی کریں گے۔ خیال رہے کہ زیکا مچھر سے پھیلنے والا وائرس ہے جو ایڈیز ایجپٹی نام کی نسل کے مچھر کے کاٹنے سے پھیلتا ہے۔

عالمی ادارہ صحت کے مطابق ایڈیز مچھر عموماً دن میں کاٹتے ہیں۔ یہ وہی مچھر ہے جو ڈینگو اور چکنگنیا بھی پھیلاتا ہے۔ اگرچہ بیشتر افراد کے لئے زیکا وائرس کی بیماری سنگین مسئلہ نہیں ہے، تاہم حاملہ خواتین خصوصاً حمل کے لئے یہ خطرناک ہو سکتی ہے۔


زیکا وائرس کی کوئی مخصوص علامات نہیں ہیں اور مریض کو ڈینگو کی طرح ہی محسوس ہوتا ہے۔ زیکا وائرس سے متاثر ہونے پر بخار آنا، بدن پر چکتے پڑ جانا اور جوڑوں میں درد محسوس ہوتا ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔