یوگی آدتیہ ناتھ نے گنائے 4.5 سال کے کام، اکھلیش نے بتایا جھوٹ، پرینکا نے کہا ’ناکام رہی حکومت‘

اتر پردیش کے وزیر اعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ نے اتوار کو 4.5 سال کا رپورٹ کارڈ جاری کیا، وہیں سابق وزیر اعلیٰ اکھلیش یادو اور کانگریس لیڈر پرینکا گاندھی نے ان پر طنز کیا ہے

یوگی آدتیہ ناتھ / آئی اے این ایس
یوگی آدتیہ ناتھ / آئی اے این ایس
user

قومی آوازبیورو

لکھنو: اتر پردیش کے وزیر اعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ نے اتوار کے روز اپنی حکومت کا رپورٹ کارڈ جاری کر دیا اور اطلاع دی کہ ان کی حکومت نے گزشتہ 4.5 سالوں میں کیا کیا ترقیاتی کام کئے۔ رپورٹ کارڈ جاری ہونے کے بعد حزب اختلاف کے لیڈران نے یوگی آدتیہ ناتھ کو ہدف تنقید بنایا ہے۔ کانگریس لیڈر پرینکا گاندھی، سابق وزیر اعلیٰ اکھلیش یادو اور مایاوتی نے یوگی آدتیہ ناتھ کو نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ یوگی آدتیہ ناتھ عوام کے سوالوں کا جواب نہ دے کر جھوٹ بول رہے ہیں۔

یوگی آدتیہ ناتھ کے رپورٹ کارڈ پر طنز کرتے ہوئے پرینکا گاندھی نے اسے جھوٹ قرار دیا۔ انہوں نے ٹوئٹ کیا، ’’یوپی حکومت کو 4.5 سال بعد عوام کے سوالوں کے جواب دینے چاہئیں تھے، لیکن نہیں۔ پھر جھوٹ، جھوٹ اور صرف جھوٹ‘‘۔


بہوجن سماج پارٹی کی سپریمو مایاوتی نے بھی رپورٹ کارڈ کے حوالہ سے یوگی آدتیہ ناتھ پر حملہ بولا ہے۔ انہوں نے ٹوئٹ کے ذریعے حکومت کے دعوؤں کو حقیقت سے دور قرار دیا ہے۔

وہیں، یوگی حکومت کے رپوٹ کارڈ پر سابق وزیر اعلیٰ اکھلیش یادو نے طنز کرتے ہوئے اسے جھوٹا قرار دیا۔ اکھلیش یادو نے ٹوئٹ کیا، کہ ’’اس متکبر حکومت کے 54 مہینے گزر چکے اور چھ مہینے بچے ہیں۔ اس حکومت میں کسان، غریب، خاتون اور نوجوان پر ظلم و ستم ہو رہا ہے اور حکومت کی جملہ بازی برقرار ہے۔ نہیں چاہئے ایسی حکومت جس کا سچ ہے، ٹھگ کا ساتھ، ٹھگ کا وکاس، ٹھگ کا وشواس، ٹھگ کا پریاس۔‘‘ اکھلیش یادو نے اپنے ٹوئٹ کے ساتھ جھوٹ کے پھول کا استعمال کیا ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔