یہ لڑائی کورونا کے خلاف ہے کانگریس یا دوسری سیاسی جماعت کے خلاف نہیں! راہل گاندھی

راہل گاندھی نے ٹوئٹر پر لکھا کہ ’’مودی حکومت کو یہ سمجھنا چاہیے کہ لڑائی کووڈ کے خلاف ہے، کانگریس یا کسی دوسری سیاسی جماعت کے خلاف نہیں۔‘‘

راہل گاندھی، تصویر@ INCIndia
راہل گاندھی، تصویر@ INCIndia
user

قومی آوازبیورو

نئی دہلی: کورونا وائرس کی صورت حال کے انتظام پر حکومت پر حملہ بولتے ہوئے کانگریس لیڈر راہل گاندھی نے منگل کے روز کہا کہ یہ لڑائی کانگریس یا کسی دوسری سیاسی جماعت کے خلاف نہیں بلکہ کورونا کے خلاف ہے، مرکزی حکومت کو یہ بات سمجھنے کی ضرورت ہے۔

راہل گاندھی نے ٹوئٹر پر لکھا کہ ’’مودی حکومت کو یہ سمجھنا چاہیے کہ لڑائی کووڈ کے خلاف ہے، کانگریس یا کسی دوسری سیاسی جماعت کے خلاف نہیں۔‘‘ راہل گاندھی نے ٹوئٹ کے ساتھ ایک خبر کا اسکرین شاٹ بھی شیئر کیا ہے جس میں سونیا گاندھی کی طرف سے اپنے سیاسی نظریہ کو بالاتر رکھتے ہوئے کورونا کے خلاف جنگ میں بھرپور تعاون دینے کا مطالبہ کیا گیا ہے۔

درریں اثنا، انڈین ایکسپریس کو دیئے گئے اپنے ایک انٹریو میں سونیا گاندھی نے کہا کہ کانگریس ہمیشہ سے ہی حکومت سے تعاون کے لئے تیار ہے۔ کورونا سے جو حالات بنے ہیں اس میں پوری طرح سسٹم (نظام) کی ناکامی نظر آتی ہے۔ سونیا گاندھی نے کہا کہ ’’میرا خیال ہے کہ کورونا سے لڑتے وقت اس لڑائی کو ’ہماری بمقامہ آپ کی‘ نہیں بلکہ ’ہماری بمقابلہ کورونا وائرس‘ ہونا چاہیے۔‘‘

کانگریس صدر سونیا گاندھی نے کہا کہ اس مشکلات سے بھرے وقت میں سیاسی اختلافات کو درکنار کرنا ضروری ہے، آفت کے وقت میں پہلے بھی ملک ایک ساتھ کھڑا ہوا ہے۔ ایک اپوزیشن جماعت ہونے کے ناطے کانگریس کی جانب سے لگاتار حکومت پر دباؤ بنایا جائے گا، اس وقت کورونا سے دفاع سے اہم کوئی اور کام نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ مشکل وقت میں کورونا سے نمٹنے میں حکومت کی کئی جگہ خامیاں نظر آ رہی ہیں اور حزب اختلاف جماعت ہونے کے ناطے ہمارے کاندھوں پر بھی ذمہ داری ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔