بہار انتخابات: دانشوروں نے عوام سے کی فرقہ پرست طاقتوں کو شکست دینے کی اپیل

دانشوروں نے اپنی اپیل میں کہا کہ بہار نے متعدد بار ملک کو راستہ دکھایا ہے اور بنیادی تبدیلیوں کا آغاز کیا ہے۔ ہم امید کرتے ہیں کہ ریاست کے رائے دہندگان اس مشعل کو روشن رکھیں گے۔

ای وی ایم
ای وی ایم
user

یو این آئی

نئی دہلی: ملک کے سو سے زیادہ ادیبوں، دانشوروں اور ثقافتی کارکنوں نے بہار اسمبلی انتخابات میں فرقہ پرست اور عوام دشمن طاقتوں کو شکست دے کر جمہوری اور سیکولر طاقتوں کی حمایت کرنے کے لئے عوام سے اپیل کی ہے۔ پیپلز رائٹرز ایسوسی ایشن پروگریسو رائٹرز ایسوسی ایشن اور جن سنسکرتی منچ سمیت کئی تنظیموں سے وابستہ لوگوں نے یہ اپیل کی ہے۔

اپیل کرنے والوں میں تجربہ کار مصنف وشوناتھ ترپاٹھی، ہندی کے مشہور شاعر اور ثقافتی کارکن اشوک واجپئی، ’پہل پتریکا‘ کے ایڈیٹر گیان رنجن، پیپلز رائٹرز ایسوسی ایشن کے جنرل سیکریٹری مرلی منوہر پرساد سنگھ، جن سنسکرتی منچ کے نائب صدر اور شاعر منگلیش ڈبرال، پروگریسو ایسوسی ایشن کے وریندر یادو، انگریزی کے مشہور شاعر اور ساہتیہ اکیڈمی کے سابق سکریٹری سچیدا نند اور بھارتیہ گیان پیٹھ کے ڈائریکٹر مدھوسودن آنند، انگریزی کے معروف شاعر کے کی دارو والا، پریم چند کے پوتے اور انگریزی کے مصنف آلوک رائے، گیتا ہری ہرن سمیت کئی مصنفین اور ثقافتی کارکن شامل ہیں۔

ان دانشوروں نے آج یہاں جاری ایک ریلیز میں کہا ’’اس وقت ملک آزادی کے بعد سب سے مشکل اور تاریک دور سے گزر رہا ہے، جمہوریت کا لباس زیب تن کر کے قرقہ پرست اور عوام دشمن طاقتیں ہمارے سیکولر ڈھانچے کو نیست و نابود کر کے ہمارے غریب سادہ لوح لوگوں کے لئے بحران پیدا کر رہی ہیں۔ انہوں نے ملک کو جھوٹ، استحصال، تشدد اور معاشی تباہی کے ’چکر ویو‘ میں ڈال دیا ہے‘‘۔

ریلیز میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ اس مشکل کے دور میں بہار جیسے باشعور ریاست کے اسمبلی انتخابات بہت اہمیت رکھتے ہیں۔ ہم مصنف، صحافی، فن کار اور ثقافتی کارکن بہار کے رائے دہند گان سے اپیل کرتے ہیں کہ وہ ترقی کا ڈھول پیٹنے والی اور نفرت پھیلانے والی قوتوں کے خلاف عوام مذہب پر جمہوریت کی پاسدار قوتوں کی حمایت کریں۔ بہار نے متعدد بار ملک کا راستہ دکھایا ہے اور بنیادی تبدیلیوں کا آغاز کیا ہے۔ ہم امید کرتے ہیں کہ ریاست کے رائے دہندگان اس مشعل کو روشن رکھیں گے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔


next