رام مندر تعمیر: چندہ یاترا کے دوران تشدد، وی ایچ پی کارکنان کے خلاف معاملہ درج!

رام مندر تعمیر کے لیے فنڈ اکٹھا کرنے نکلی یاترا کے دوران دو گروپ کے درمیان خوب پتھراؤ اور ہنگامہ آرائی ہوئی۔ اس تشدد کے پیش نظر فساد پھیلانے کے الزام میں 40 لوگوں کی گرفتاری بھی ہوئی ہے۔

علامتی تصویر
علامتی تصویر
user

قومی آوازبیورو

رام مندر تعمیر کے لیے چندہ وصولی کے مقصد سے پورے ملک میں یاترائیں نکل رہی ہیں۔ رام مندر ٹرسٹ اور وی ایچ پی کی مشترکہ کوششوں سے یہ چندہ اکٹھا کیا جا رہا ہے، لیکن گجرات کے بھج میں وی ایچ پی کارکنان نے کچھ ایسا کیا جس سے تشدد پیدا ہو گیا اور حالات اتنے خراب ہو گئے کہ پولس کو فوری کارروائی کرتے ہوئے پورے علاقے میں آمد و رفت پر روک لگانی پڑی۔

ہندی نیوز پورٹل ’آج تک‘ پر شائع خبر کے مطابق رام مندر تعمیر کے لیے فنڈ اکٹھا کرنے نکلی یاترا کے دوران دو گروپ کے درمیان خوب پتھراؤ اور ہنگامہ آرائی ہوئی۔ اس تشدد کے پیش نظر فساد پھیلانے کے الزام میں 40 لوگوں کی گرفتاری بھی ہوئی ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ بھج کے انجار تحصیل واقع کرانا گاؤں میں منگل کے روز چندہ اکٹھا کرنے کے لیے وی ایچ پی کارکنان نے یاترا نکالی تھی جب دو طبقات کے درمیان تصادم پیش آیا۔ بھج پولس نے الگ الگ تین واقعات میں معاملے درج کر کارروائی شروع کر دی ہے۔


رپورٹ کے مطابق انتظامیہ نے حالات کو قابو میں کر لیا ہے اور سبھی ملزمین پر تعزیرات ہند کی دفعات 323، 143، 147، 149، 337، 296 کے تحت معاملہ درج کیا ہے۔ علاوہ ازیں ایودھیا میں رام مندر تعمیر کے لیے پیسہ اکٹھا کرنے کے نام پر خود کے فائدے کے لیے دوسروں کو نقصان پہنچانے اور فساد کرانے سے متعلق دفعات بھی لگائی گئی ہیں۔ بتایا جا رہا ہے کہ کلکٹر کے ذریعہ جاری نوٹیفکیشن کی خلاف ورزی کا معاملہ بھی وی ایچ پی کارکنان کے خلاف درج کیا گیا ہے۔

تشدد کے واقعات کے بعد دونوں ہی طبقات کے لوگوں نے عوام سے امن برقرار رکھنے کی اپیل کی ہے۔ ریاست میں برسراقتدار بی جے پی اور کانگریس کی جانب سے بھی مقامی لوگوں کو امن و امان میں خلل پیدا نہ کرنے کی گزارش کی گئی ہے۔ پولس نے 40 لوگوں کی گرفتاری کے بعد حفاظت کے سخت انتظامات بھی کیے ہیں۔


واضح رہے کہ رام مندر تعمیر کے لیے چندہ اکٹھا کرنے کے مقصد سے گزشتہ اتوار کو بھی یہاں ایک یاترا نکالی گئی تھی اور اس یاترا کے دوران پتھراؤ و آگ زنی کی واردات ہوئی تھی۔ اس واقعہ میں ایک شخص کی موت بھی واقع ہو گئی تھی۔ واردات کے بعد بھج پولس نے معاملہ درج کرتے ہوئے 8 سے 10 لوگوں کے خلاف فساد پھیلانے کے الزام میں معاملہ درج کیا تھا اور 30 سے زائد لوگوں کے خلاف ریلی نکالنے اور سوشل ڈسٹنسنگ کے ضابطوں کی خلاف ورزی کا معاملہ بھی درج کیا تھا۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔


Published: 19 Jan 2021, 10:43 PM