غیر ملکی مدد ملنے پر مرکزی حکومت کا بار بار چھاتی ٹھوکنا مایوس کن: راہل گاندھی

مودی سرکار پر حملہ کرتے ہوئے راہل گاندھی نے کہا کہ "مرکزی حکومت کا بیرونی ممالک سے حمایت ملنے پر بار بار سینہ ٹھوکنا مایوس کن ہے۔ اگر مودی سرکار نے اپنا کام کیا ہوتا تو ایسی نوبت نہیں آتی۔"

راہل گاندھی، تصویر یو این آئی
راہل گاندھی، تصویر یو این آئی
user

یو این آئی

کانگریس کے رہنما راہل گاندھی نے پیر کے روز کورونا وبا کے درمیان ہندوستان کو غیر ملکی امداد لینے کے لئے مرکزی حکومت پر تنقید کی اور الزام لگایا کہ حکومت نے اپنا کام صحیح طریقے سے نہیں کیا ہے۔ راہل گاندھی نے ٹوئٹ کرتے ہوئے کہا کہ "مرکزی حکومت کا بیرونی ممالک سے حمایت ملنے پر بار بار سینہ ٹھوکنا مایوس کن ہے۔ اگر مودی سرکار نے اپنا کام کیا ہوتا تو ایسی نوبت نہیں آتی۔"

راہل گاندھی نے اتوار کو کووڈ کی خراب صورتحال سے نمٹنے کے لئے نریندر مودی کی زیرقیادت مرکزی حکومت کو نشانہ بنایا اور انہوں ایک ٹویٹ میں ایک ہندی کیپشن کی تصویر منسلک کرتے ہوئے کہا کہ "شہروں کے بعد اب دیہات بھی خدا کے رحم و کرم پر رہ گئے ہیں، کووڈ- 19 وبائی بیماری کی دوسری لہر گاؤں میں اب قہر برپا کیے ہوئے ہے۔"


واضح ہو کہ مرکزی وزارت صحت کی جانب سے پیر کی صبح جاری اعداد و شمار کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں میں کورونا کے 366161 نئے کیسز کی آمد کے ساتھ متاثرہ افراد کی تعداد بڑھ کر دو کروڑ 26 لاکھ 62 ہزار 575 ہوگئی۔ وہیں 353818 افراد اس وبا سے شفایاب ہوئے، جس کے بعد کووڈ- 19 کو شکست دینے والوں کی تعداد بڑھ کر 18671222 ہوگئی۔ اس وقت ملک میں کورونا کے فعال معاملوں کی تعداد 3745237 ہے۔ اسی دوران 3754 مریضوں کی اموات کے ساتھ اس وبا سے مرنے والوں کی تعداد 2 لاکھ 46 ہزار 116 ہوگئی ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔