مہنگی بجلی سے عوام پریشان، 100 روپے میں 100 یونٹ بجلی فراہم کرائی جائے: کمل ناتھ

کانگریس لیڈر کمل ناتھ نے ٹوئٹ کر کے کہا کہ کانگریس کی حکومت نے 2019 میں 100 یونٹ بجلی 100 روپے میں دینے کا فیصلہ کیا تھا، لیکن موجودہ حکومت نے بجلی مہنگی کر دی ہے جس سے عوام پریشان ہیں۔

اعلیٰ کمل ناتھ، تصویر آئی اے این ایس
اعلیٰ کمل ناتھ، تصویر آئی اے این ایس
user

قومی آوازبیورو

بھوپال: مدھیہ پردیش کے سابق وزیر اعلیٰ اور کانگریس کے سینئر لیڈر کمل ناتھ نے اتوار کے روز مہنگی شرحوں پر بجلی دستیاب کرانے اور بجلی کے بلوں کے ذریعے عوام سے وصولی کرنے کے تعلق سے ریاست کی شیو راج سنگھ چوہان کی قیادت والی بی جے پی حکومت کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا۔


کانگریس لیڈر کمل ناتھ نے ٹوئٹ کر کے کہا کہ کانگریس کی حکومت نے 2019 میں 100 یونٹ بجلی 100 روپے میں دینے کا فیصلہ کیا تھا، لیکن موجودہ حکومت نے بجلی مہنگی کر دی ہے اور جس سے عوام پریشان ہیں۔ کمل ناتھ نے ریاستی حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ عوام کو 100 روپے میں 100 یونٹ بجلی دی جائے، یہ عوام کا حق ہے۔

خیال رہے کہ مدھیہ پردیش میں بجلی کی شرحوں میں اضافہ کرنے کی تیاری چل رہی ہے اور بحث ہے کہ بجلی کے داموں میں 8 فیصد تک کا اضافہ کیا جا سکتا ہے۔ دراصل جبل پور ہائی کورٹ نے مالی سال 2021-22 میں بجلی کی شرحوں کو تبدیل کرنے پر عائد پابندی کو ہٹا لیا ہے، جس کے بعد ریاستی الیکٹریسٹی ریگولیٹری کمیٹی نے نیا ٹیرف نافذ کرنے کی تیاری کر لی ہے۔ خبر ہے کہ بجلی کمپنی نے 8.2 فیصد اضافہ کی سفارش کی ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔