پولس اہلکاروں کی شہادت، یوگی حکومت کی ناکامی کا نتیجہ: دانش علی

دانش علی کا کہنا ہے کہ کانپور میں شہید ہوئے ہمارے بہادر جوان اترپردیش حکومت کی غلط پالیسیوں کا نتیجہ ہے جس کے سبب خطرناک بدمعاش وکاس دوبے کھلا گھومتا رہا۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

یو این آئی

نئی دہلی: بہوجن سماج پارٹی کے رکن پارلیمنٹ کنور دانش علی نے کہا ہے کہ اترپردیش کی یوگی حکومت کی ناکامی کی وجہ سے کانپور میں آٹھ پولس اہلکاروں کی شہادت ہوگئی۔ امروہہ سے لوک سبھا رکن پارلیمنٹ دانش علی نے ٹوئٹ کر کے اتوار کو اترپردیش حکومت کے کام کرنے کی پالیسیوں پر سوال کھڑے کیے ہیں۔

دانش علی کا کہنا ہے کہ ’’کانپور میں شہید ہوئے ہمارے بہادر جوان اترپردیش حکومت کی غلط پالیسیوں کا نتیجہ ہے جس کے سبب خطرناک بدمعاش وکاس دوبے کھلا گھومتا رہا۔ حکومت کا پورا نظام صحافیوں، طالب علموں، حقوق انسانی کے کارکنوں اور اپنے فکری مخالفوں کو جھوٹے مقدموں میں جیل بھیجنے کا کام کرتا رہا اور جرائم پیشہ عناصر کھلے عام گھومتے رہے۔‘‘


واضح رہے کہ تین جولائی کی رات قتل کے معاملے میں مطلوب وکاس دوبے کو گرفتار کرنے گئی پولس کی ٹیم پر بدمعاشوں نے حملہ کردیا تھا۔ اس واقعہ میں ایک ڈپٹی سپرنٹنڈنٹ اور ایک تھانہ انچارج سمیت آٹھ جوان شہید ہوگئے تھے۔

واقعہ کے کچھ ہی گھنٹوں کے اندر پولیس نے واردات میں ملوث وکاس دوبت کے دو رشتہ داروں کو مار گرایا تھا۔ دوبے کی تلاش میں پولس کی پچاس سے زیادہ ٹیمیں ریاست کے مختلف اضلاع میں تلاش کر رہی ہیں۔ اس سلسلے میں پانچ سو سے زیادہ موبائل فون کو سرویلانس پر رکھا گیا ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔