کیرالہ: دو دن سے پہاڑ پر پھنسے بابو کو فوج نے سخت مشقت کے بعد باہر نکالا

کیرالہ کے بابو نے دو ساتھیوں کے ساتھ چیراڈ پہاڑی کی چوٹی پر جانے کا فیصلہ کیا تھا، دیگر دونوں افراد واپس لوٹ آئے مگر بابو نے چوٹی کی چڑھائی جاری رکھی اور وہیں پھنس گیا، اب اسے باہر نکال لیا گیا ہے

تصویر بشکریہ این ڈی ٹی وی
تصویر بشکریہ این ڈی ٹی وی
user

قومی آوازبیورو

ترواننت پورم: کیرالہ کے پلکڈ علاقہ میں ملمپوزا کی پہاڑیوں پر دو دن سے پھنسے نوجوان کو فوج نے بحفاظت نکال لیا ہے۔ پیر کے روز سے پھنسے اس نوجوان کو بچانے کی کوششیں کی جا رہی تھیں لیکن راحتی عملہ اس تک کھانا پانی تک بھی نہیں پہنچا پا رہا تھا۔ کیرالہ کے وزیر اعلیٰ پنارائی وجین نے ٹوئٹ کر کے اطلاع دی ہے کہ فوج کی ریسکیو ٹیم نوجوان سے رابطہ قائم کرنے میں کامیاب رہی ہے۔

نوجوان کو بچانے کے لئے کوسٹ گارڈ کے ہیلی کاپٹر کی بھی مدد لی گئی تھی۔ دیگر کوششیں بھی کی گئی تھیں، تاہم پہاڑی کی چٹانوں میں پھنسے بابو کو آج صبح تک نکالا نہیں جا سکا تھا۔ ایک ویڈیو میں تقریباً 20 سال کا آر بابو ایک ٹی شرٹ اور شارٹ پہنے نظر آ رہا تھا۔ خطرناک حالت میں بیٹھا بابو کسی طرح ایک چھوٹی سی دراڑ میں اپنا توازن قائم رکھے ہوئے تھا۔


ایک پریس بیان میں کہا گیا تھا کہ کوہ پیما اور ریسکیو آپریشن میں مہارت رکھنے والی ٹیمیں سڑک کے راستہ سفر کریں گی کیونکہ رات میں ہیلی کاپٹر سے سفر کرنا ناممکن ہے۔ قبل ازیں، کوسٹ گارڈ کی جانب سے کی گئی تمام کوششیں رائیگاں گئی تھیں۔ اس کے بعد این ڈی آر ایف کی ٹیم نے بھی نوجوان تک پہنچنے کی کوشش کی تھی مگر وہ بھی ناکام رہی تھی۔

راحتی عملہ کے ایک رکن نے میڈیا چینل کو بتایا کہ یہاں پر دن میں گرمی کافی تیز اور ناقابل برداشت ہوتی ہے، جبکہ رات کے بعد ہوا کافی سرد ہو جاتی ہے۔ اس کے علاوہ جنگلی جانوروں کا خطرہ بھی بنا رہتا ہے، جس سے راحت اور بچاؤ کے کام میں مشکلات پیش آتی ہیں۔

Follow us: Facebook, Twitter, Google News

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔


/* */