کشمیر: سیزن کی پہلی برف باری کے ساتھ ہی بانڈی پورہ- گریز روڈ بند

راز دان ٹاپ اور دیگر ملحقہ علاقوں میں ہونے والی برف باری کے باعث پیر کی صبح بانڈی پورہ - گریز روڈ پر ٹریفک کی نقل و حمل بند ہوگئی۔

تصویر یو این آئی
تصویر یو این آئی
user

یو این آئی

محکمہ موسمیات کے ایک ترجمان کے مطابق وادی میں اگلے چوبیس گھنٹوں کے دوران کہیں کہیں ہلکے درجے کی بارشیں ہونے کا امکان ہے۔ انہوں نے بتایا کہ وادی میں 12 اکتوبر تک موسم خراب رہ سکتا، تاہم اس کے بعد موسم خشک رہنے کی توقع ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ سری نگر میں جہاں گزشتہ شب کا کم سے کم درجہ حرارت 9.8 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ ہوا ہے، میں گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران 8.4 ملی میٹر بارش ریکارڈ ہوئی ہے۔

سری نگر: وادی کشمیر میں سیزن کی پہلی برف باری ہونے کے ساتھ ہی شمالی کشمیر کے ضلع باںڈی پورہ کی گریز وادی کا اپنے ضلع ہیڈ کوارٹر کے ساتھ زمینی رابطہ منقطع ہوگیا۔ سرکاری ذرائع نے بتایا کہ وادی گریز کے دسن علاقے، جو اونچائی پر واقع ہے، میں اتوار کی شب برف باری ہوئی جبکہ میدانی علاقوں میں موسلا دھار بارشیں ہوئیں۔ انہوں نے بتایا کہ راز دان ٹاپ اور دیگر ملحقہ علاقوں میں ہونے والی برف باری کے باعث پیر کی صبح بانڈی پورہ - گریز روڈ پر ٹریفک کی نقل و حمل بند ہوگئی۔ بتادیں کہ وادی کشمیر میں دوران شب موسلا دھار بارشیں ہوئیں جن سے درجہ حرارت میں مزید گراوٹ درج ہوئی۔


وادی کے مشہور زمانہ سیاحتی مقام گلمرگ میں کم سے کم درجہ حرارت 1.5 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا جبکہ وہاں گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران 26.0 ملی میٹر بارش ریکارڈ ہوئی ہے۔ وادی کے دوسرے مشہور سیاحتی مقام پہلگام جہاں کم سے کم درجہ حرارت 6.7 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ ہوا ہے، میں گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران 10.6 ملی میٹر بارش ریکارڈ ہوئی ہے۔

سرحدی ضلع کپوارہ میں کم سے کم سے درجہ حرارت 7.6 ڈگری سینٹی گریڈ جبکہ وہاں گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران19.9 ملی میٹر بارش ریکارڈ ہوئی ہے۔ گیٹ وے آف کشمیر کے نام سے جانے والے قصبہ قاضی گنڈ میں کم سے کم درجہ حرارت 8.4 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ ہوا ہے جبکہ وہاں گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران 15.4ملی میٹر بارش ریکارڈ ہوئی ہے۔


کوکر ناگ جہاں کم سے کم درجہ حرارت 7.0 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ ہوا ہے، میں زشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران 13.4 ملی میٹر بارش ریکارڈ ہوئی ہے۔ دریں اثنا وادی میں پیر کی صبح بارشوں کے بعد موسم میں بتدریج بہتری آنے لگی۔ اگر چہ مطلع ابر آلود رہا تاہم آفتاب نے بھی بادلوں کی اوٹ سے باہر نکلنے کی کئی کامیاب کوششیں کیں۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔