نفرت، تشدد اور بائیکاٹ والا رویہ ملک کو کمزور کر رہا: راہل گاندھی

اتوار کے روز رام نومی کے دوران مدھیہ پردیش کے کم از کم دو اضلاع میں فرقہ وارانہ تشدد دیکھنے کو ملا، تشدد کا پہلا واقعہ کھرگون ضلع میں پیش آیا جہاں تقریباً نصف درجن پولیس اہلکار زخمی ہو گئے۔

راہل گاندھی، تصویر ٹوئٹر @INCIndia
راہل گاندھی، تصویر ٹوئٹر @INCIndia
user

قومی آوازبیورو

رام نومی جلوس کے دوران ملک کے کئی حصوں میں تشدد کی خبروں پر فکر ظاہر کرتے ہوئے کانگریس لیڈر راہل گاندھی نے پیر کے روز کہا کہ نفرت ملک کو کمزور کر رہی ہے۔ ایک ٹوئٹ میں انھوں نے کہا کہ ’’نفرت، تشدد اور بائیکاٹ ہمارے پیارے ملک کو کمزور کر رہے ہیں۔ بھائی چارے، امن اور خیر سگالی کی اینٹوں سے ترقی کا راستہ ہموار ہوتا ہے۔ آئیے ایک منصفانہ اور مجموعی ہندوستان کو محفوظ کرنے کے لیے ایک ساتھ کھڑے ہوں۔‘‘

دراصل مدھیہ پردیش کے کم از کم دو اضلاع میں اتوار کو رام نومی تقریب کے دوران فرقہ وارانہ تشدد دیکھنے کو ملا۔ تشدد کا پہلا واقعہ کھرگون ضلع میں پیش آیا جہاں تقریباً نصف درجن پولیس اہلکار زخمی ہو گئے، جب کہ اسی طرح کا واقعہ بڑوانی ضلع کے سیندھوا شہر میں بھی پیش آیا۔


کھرگون میں رام نومی کے جلوس میں ڈی جے پر تنازعہ کے بعد مبینہ طور پر پتھراؤ کیا گیا جس کے بعد دو فریق آمنے سامنے آ گئے۔ دونوں فریقین میں پتھر بازی کے ساتھ آگ زنی کے واقعات ہوئے جس میں کچھ گاڑیوں میں آگ لگا دی گئی۔ پولیس نے حالات کو قابو میں کرنے کے لیے آنسو گیس کے گولے داغے اور طاقت کا استعمال کیا۔ حالات کو سنبھالنے کے لیے افسران کو تین علاقوں میں کرفیو اور پورے شہر میں سی آر پی سی کی دفعہ 144 کو نافذ کرنی پڑی۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔