کورونا وائرس کے یومیہ معاملے میں ایک بار پھر اضافہ، 282 مریضوں کی موت

مرکزی وزارت صحت کی جانب سے جمعرات کی صبح جاری کردہ تازہ ترین اعداد و شمار کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کورونا وائرس کے 31923 نئے کیسز کی تصدیق ہوئی ہے۔

کورونا وائرس، تصویر یو این آئی
کورونا وائرس، تصویر یو این آئی
user

یو این آئی

نئی دہلی: ملک میں ایک بار پھر کورونا وائرس کے یومیہ کیسز میں اضافہ ہوا ہے۔ دریں اثنا بدھ کو ملک میں 71 لاکھ 38 ہزار 205 افراد کو کورونا کی ویکسین دی گئی اور اب تک 83 کروڑ 39 لاکھ 90 ہزار 49 افراد کو ویکسین دی جا چکی ہے۔ مرکزی وزارت صحت کی جانب سے جمعرات کی صبح جاری کردہ تازہ ترین اعداد و شمار کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کورونا وائرس کے 31923 نئے کیسز کی تصدیق ہوئی ہے جس کی وجہ سے متاثرہ افراد کی تعداد تین کروڑ 35 لاکھ 63 ہزار 421 ہوگئی ہے۔

دریں اثنا 31990 مریضوں کی صحت یابی کے بعد کورونا سے شفایاب لوگوں کی تعداد تین کروڑ 28 لاکھ 15 ہزار 711 ہو گئی ہے۔ ملک میں کورونا وائرس کے ایکٹیو کیسز 349 سے بڑھ کر تین لاکھ 2 ہزار 338 ہو گئے ہیں۔ اسی مدت کے دوران مزید 282 مریضوں کی موت کی وجہ سے ہلاکتوں کی مجموعی تعداد بڑھ کر 446050 ہوگئی ہے۔ ملک میں جان لیوا کورونا وائرس سے شفایابی کی شرح بڑھ کر 97.77 فیصد، فعال کیسزکی شرح 0.90، جبکہ اموات کی شرح 1.33 فیصد رہ گئی ہے۔


ریاست کیرالہ فی الحال کورونا وائرس کے ایکٹیو کیسز کے لحاظ سے ملک میں پہلے نمبر پر ہے، تاہم گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران اس ریاست میں 169 ایکٹیو کیسز کم ہوئے ہیں، یہ تعداد اب 161596 ہوگئی ہے۔ دوسری جانب 19702 مریضوں کی شفا یابی کی وجہ سے کورونا سے شفایاب لوگوں کی تعداد بڑھ کر 4373966 ہوگئی ہے۔ اسی مدت کے دوران 142 مریضوں کی موت کے ساتھ ہلاکتوں کی تعداد بڑھ کر 24039 ہوگئی ہے۔

ریاست مہاراشٹر میں کورونا وائرس کے ایکٹیو کیسز 725 سے گھٹ کر 43544 رہ گئے ہیں، جبکہ 48 مزید مریضوں کی موت کی وجہ سے ہلاکتوں کی تعداد بڑھ کر 138664 ہوگئی ہے۔ ساتھ ہی 4285 لوگوں کی صحت یابی کے باعث کورونا سے شفایاب ہونے والے لوگوں کی تعداد 6349029 ہو گئی ہے۔ قومی دارالحکومت دہلی میں کورونا وائرس کے فعال کیسز 11 سے بڑھ کر 411 ہوگئے ہیں جبکہ صحت یاب ہونے والوں کی تعداد بڑھ کر 1413090 ہوچکی ہے۔ قومی راجدھانی میں جان لیوا کورونا وبا کی وجہ سے اب تک 25085 افراد اپنی جانوں سے ہاتھ دھو بیٹھے ہیں۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔