ایم پی: پٹرول-ڈیزل کی بڑھتی قیمتوں کے خلاف کانگریس کا مظاہرہ، کئی پارٹی کارکنان گرفتار

سرکاری ذرائع کا کہنا ہے کہ اجازت کے بغیر مظاہرہ کرنے پر نصف درجن سے زائد کانگریسی کارکنوں کو گرفتار کیا گیا ہے۔ گرفتاری کے دوران پولیس اور کارکنوں کے مابین تیکھی نوک جھونک بھی ہوئی۔

تصویر ٹوئٹر @INCMP
تصویر ٹوئٹر @INCMP
user

قومی آوازبیورو

اندور: کانگریس کارکنوں کو پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں اضافے کے خلاف احتجاج کرنے پر آج مدھیہ پردیش کے اندور شہر میں گرفتار کیا گیا ہے۔ آج صبح پولیس ہیڈ کوارٹرز کے سامنے جمع ہونے والے سینکڑوں کانگریس کارکنوں نے مرکزی اور ریاستی حکومت کے خلاف نعرے بازی کی۔ اس دوران دو درجن سے زائد کانگریسی کارکنوں نے مہنگائی کے ساتھ ساتھ سماجی کارکنوں کی گرفتاری کے خلاف بھی احتجاجی مظاہرہ کیا۔ سرکاری ذرائع کا کہنا ہے کہ اجازت کے بغیر مظاہرہ کرنے پر نصف درجن سے زائد کانگریسی کارکنوں کو گرفتار کیا گیا ہے۔ گرفتاری کے دوران پولیس اور کارکنوں کے مابین تیکھی نوک جھونک بھی ہوئی۔

واضح رہے کہ عالمی بازار میں خام تیل کی قیمتوں میں اضافہ نہ ہونے کے باوجود ہندوستان میں تقریباً روزانہ پٹرول و ڈیزل کی قیمتوں میں اضافہ ہو رہا ہے۔ اس اضافہ کے خلاف ملک کی مختلف ریاستوں میں کانگریس سمیت دیگر پارٹیاں مرکز کی مودی حکومت کو تنقید کا نشانہ بنا رہی ہیں۔ یہاں تک کہ بہار حکومت میں بی جے پی کی شریک پارٹی جنتا دل یو کے کئی سرکردہ لیڈران بھی پٹرول و ڈیزل کی قیمتوں میں اضافہ پر فکرمندی کا اظہار کر چکے ہیں۔ کانگریس کے سرکردہ لیڈران سوشل میڈیا کے ساتھ ساتھ سڑک پر بھی تیل کی قیمتوں میں اضافہ کے خلاف آواز اٹھا رہے ہیں اور مرکز سے جلد اس پر قابو پانے کا مطالبہ کر رہے ہیں۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔