لاک ڈاؤن میں پھنسے 480 طلبا کوٹہ سے دہلی لوٹے، والدین نے لی راحت کی سانس

طلباء میڈیکل اور انجینئرنگ کی تیاریوں کے لئے کوٹہ گئے تھے، لیکن کورونا وائرس کے سبب ملک میں نافذ لاک ڈاؤں کی وجہ سے وہ اپنے گھر واپس نہیں لوٹ پا رہے تھے اور کئی ہفتوں سے وہاں پھنسے ہوئے تھے

تصویر قومی آواز / وپن
تصویر قومی آواز / وپن
user

قومی آوازبیورو

راجستھان کے کوٹہ سے چلے 480 طلباء دہلی پہنچ گئے ہیں۔ 40 بسوں میں سوار یہ طلبا اتوار کی صبح 5 بجے دہلی کے کشمیری گیٹ بس اڈے پر پہنچے۔ یہاں تمام طلبا کا طبی معائنہ کیا گیا۔ اس کے بعد ان سبھی کو ڈی ٹی سی بسوں کے ذریعے ان کے گھروں تک چھوڑ دیا گیا۔

لاک ڈاؤن میں پھنسے 480 طلبا کوٹہ سے دہلی لوٹے، والدین نے لی راحت کی سانس

دہلی کے وزیر ٹرانسپورٹ کیلاش گہلوت نے ٹوئٹ کرکے اس کی اطلاع دی۔ انہوں نے کہا کہ بچوں کو واپس لاتے ہوئے معاشرتی فاصلے کے ضابطوں پر سختی سے عمل کیا گیا۔ واضح رہے کہ ایک بس میں زیادہ سے زیادہ 20 بچے سوار ہو کر واپس لوٹے ہیں۔

اس سے قبل وزیر ٹرانسپورٹ کیلاش گہلوت نے بتایا تھا کہ کشمیری گیٹ پر طبی معائنے کے بعد ہی تمام طلبا کو ان کے گھر بھیجا جائے گا۔ غورطلب ہے کہ کشمیری گیٹ بس اڈے پر بچوں کی مدد کے لئے ہیلپ ڈیسک قائم کی گئی تھی۔ یہاں ڈاکٹر، پولیس اہلکار اور محکمہ ٹرانسپورٹ کے عہدیدار اور دیگر عملہ موجود تھا، جو طلبا کی گھر واپسی کے تعلق سے تعاون کر رہے تھے۔

لاک ڈاؤن میں پھنسے 480 طلبا کوٹہ سے دہلی لوٹے، والدین نے لی راحت کی سانس

واضح رہے کہ طلباء میڈیکل اور انجینئرنگ کی تیاریوں کے لئے کوٹہ گئے تھے لیکن کورونا وائرس کے سبب ملک میں نافذ لاک ڈاؤں کی وجہ سے وہ گھر واپس نہیں لوٹ پا رہے تھے اور کئی ہفتوں سے وہاں پھنسے ہوئے تھے۔

ادھر، دہلی میں موجود طلبا کے والدین دہلی حکومت سے بار بار التجا کر رہے تھے کہ وہ ان بچوں کو واپس لایا جائے۔ اس کے بعد ہفتے کے روز دہلی حکومت نے ڈی ٹی سی کی 40 بسیں کوٹہ کے لئے روانہ کیں۔

next