’ہو سکتا ہے دنیا سے کبھی نہ جائے کورونا وائرس‘

عالمی ادارہ صحت کے کارگزار ڈائریکٹر ڈاکٹر مائیکل جے ریان نے کہا کہ ایچ آئی وی انفیکشن کی طرح کورونا وائرس دنیا میں ہمیشہ رہنے والا وائرس ہو سکتا ہے۔ یہ وائرس کبھی نہیں جائے گا۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

قومی آوازبیورو

کورونا وائرس نے دنیا بھر میں قہر مچا رکھا ہے۔ اس وبا سے تقریباً 3 لاکھ لوگوں کی موت ہو چکی ہے۔ وہی کورونا وائرس کو لے کر عالمی ادارہ صحت نے بڑی تنبیہ جاری کی ہے۔ ڈبلیو ایچ او کے کارگزار ڈائریکٹر ڈاکٹر مائیکل جے ریان نے کہا کہ "ایچ آئی وی انفیکشن کی طرح کورونا وائرس دنیا میں ہمیشہ رہنے والا وائرس ہو سکتا ہے۔ ہو سکتا ہے کہ یہ وائرس کبھی نہ جائے۔"

ڈاکٹر مائیکل جے ریان نے اپنی بات جاری رکھتے ہوئے مزید کہا کہ وہ ایچ آئی وی اور کورونا وائرس کا موازنہ نہیں کر رہے ہیں، لیکن مجھے لگتا ہے کہ ہمیں پریکٹیکل ہونا چاہیے۔ مجھے نہیں لگتا کہ کسی کے پاس یہ جانکاری ہے کہ یہ بیماری کب ختم ہوگی۔ کورونا وائرس کو روکنے کے لیے لگی پابندی کو ہٹانا ابھی ٹھیک نہیں ہے، کیونکہ کیسز اب بھی بہت زیادہ سامنے آ رہے ہیں۔ انھوں نے آگے کہا کہ اگر پابندی ہٹی تو وائرس بڑے پیمانے پر پھیلے گا، اس لیے آگے بھی لاک ڈاؤن بڑھانے کا امکان ہے۔

غور طلب ہے کہ دنیا بھر کے سائنسداں کورونا وائرس کی ویکسین تلاش کرنے کے لیے رات دن جٹے ہوئے ہیں۔ اس قاتلانہ وائرس کی ابھی تک کوئی دوا یا ویکسین ایجاد نہیں ہوئی ہے۔ ایسے وقت میں ڈبلیو ایچ او کا یہ کہنا کہ کورونا وائرس کبھی ختم نہیں ہوگا، خوفزدہ کرنے والا ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔