ایان مورگن اگلے سال ہونے والے ٹی-20 عالمی کپ تک انگلینڈ کے کپتان رہنا چاہتے ہیں

مورگن نے کہا کہ نیوزی لینڈ نے بڑی چالاکی سے میچ ان کے ہاتھ سے نکال لیا، اس نے پاور پلے میں تیز شروعات کی کوشش کی، پھر درمیانی اوورز میں اننگز کو آگے بڑھایا اور پھر آخر میں دوبارہ رفتار پکڑی۔

ایون مورگن، تصویر آئی اے این ایس
ایون مورگن، تصویر آئی اے این ایس
user

یو این آئی

دبئی: انگلینڈ کے کپتان ایون مورگن نے اصرار کیا ہے کہ وہ اگلے سال ہونے والے ٹی 20 ورلڈ کپ تک ٹیم کے کپتان کے طور پر برقرار رہنا چاہتے ہیں۔ انگلینڈ پہلے سیمی فائنل میں نیوزی لینڈ کے ہاتھوں شکست کے بعد ورلڈ کپ سے باہر ہو گیا ہے۔ وہیں بلے کے ساتھ مورگن کی کارکردگی بھی کچھ خاص نہیں رہی۔ انہوں نے اس سال 39 ٹی- ٹوئنٹی میچوں میں 17.71 کی اوسط اور 118.61 کے اسٹرائیک ریٹ سے رنز بنائے ہیں۔ ورلڈ کپ میں بھی انہوں نے چار اننگز میں صرف 68 رنز بنائے۔

شکست کے بعد مورگن نے کہا کہ مجھے امید ہے کہ میری کپتانی کی اننگز جاری رہے گی۔ میں اب بھی ٹیم میں اپنا تعاون دے رہا ہوں۔ لڑکوں نے بھی اپنا سب کچھ دیا اور مجھے بطور کپتان ان پر فخر ہے۔ مورگن نے کہا کہ جمی نیشم کی اننگز نے اس میچ میں فرق پیدا کیا۔ "یہ ایک قریبی مقابلہ تھا،" ۔ ہم زیادہ تر میچ میں گیند اور بلے دونوں کے ساتھ بہتر تھے۔ لیکن نیشام نے آکر میچ پلٹ دیا۔


مورگن نے کہا کہ نیوزی لینڈ نے بڑی چالاکی سے میچ ان کے ہاتھ سے نکال لیا۔ اس نے پاور پلے میں تیز شروعات کرنے کی کوشش کی، پھر درمیانی اوورز میں اننگز کو آگے بڑھایا اور پھر آخر میں دوبارہ رفتار پکڑی۔ ڈیتھ اوورز میں انگلینڈ کے گیند بازوں کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑا۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔