سلمان خان نے اپنا وعدہ پورا کیا، سنیما سے وابستہ 25 ہزار کارکنان کو امداد فراہم کی

فیڈریشن آف ویسٹرن انڈیا سنے ایمپلائز (ایف ڈبلیو آئی سی ای) کے صدر بی این تیوری نے کہا کہ سلمان خان ہمیشہ سے ہی فلمی دنیا سے وابستہ افراد بالخصوص یومیہ مزدوروں کی کوئی نہ کوئی امداد کرتے رہتے ہیں۔

سلمان خان / یو این آئی
سلمان خان / یو این آئی
user

قومی آوازبیورو

نئی دہلی: بالی ووڈ کے بھائی سلمان خان ضرورت مندوں کی مدد کرنے کے لئے مشہور ہیں اور ان کی دریا دلی کی خبریں اکثر منظر عام پر آتی رہتی ہیں۔ سنیما سے وابستہ کارکنان لاک ڈاؤن کے سبب کسمپرسی کی زندگی گزر رہے ہیں اور انہیں بھی سلمان خان کی امداد ملنا شروع ہو گئی ہے۔ آج تک کی رپورٹ کے مطابق سلمان خان نے 25 ہزار افراد کے کھاتے میں 1500 روپے ماہانہ فراہم کرنے کا اعلان کیا تھا اور یہ رقم انہیں حاصل ہونا شروع ہو گئی ہے۔

فیڈریشن آف ویسٹرن انڈیا سنے ایمپلائز (ایف ڈبلیو آئی سی ای) کے صدر بی این تیوری نے کہا کہ سلمان خان ہمیشہ سے ہی فلمی دنیا سے وابستہ افراد بالخصوص یومیہ مزدوروں کی کوئی نہ کوئی امداد کرتے رہتے ہیں۔ اس وبائی دور میں بھی انہویں نے کئی مرتبہ ہماری تنظیم کو تعاون دے کر لوگوں کی امداد کی، ان کے وعدے کے مطابق 25 ہزار سنیما سے وابستہ کارکنان کے بینک کھاتوں میں جلد ہی رقوم کی منتقلی شروع ہو جائے گی۔

انہوں نے کہا کہ سلمان خان کی ٹیم کی جانب سے تمام خانہ پری کر دی گئی ہے اور جلد لوگوں کو اس کا فائدہ ملنا شروع ہو جائے گا۔ بی این تیواری نے مزید کہا کہ ان کی تنظیم اس کے علاوہ 50 ہزار کارکنان کی مفت ٹیکہ کاری کا کام بھی انجام دینے جا رہی ہے۔ اس کارِ خیر کے لئے یش راج لمز، پروڈیوسرز ایسوسی ایشن اور پروڈیوسر اینڈ ڈیولپر آنند بخشی شامل ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ٹیکہ اندوزی کا کام 10 جون سے شروع ہونے جا رہا ہے اور ہمارا ہدف زیادہ سے زیادہ کارکنان کو ٹیکہ لگانے کا رہے گا۔

تیواری نے مزید کہا کہ ان کی تنظیم فیڈریشن آف ویسٹرن انڈیا سنے ایمپلائز کی جانب سے بھیجے گئے کارکنان کے ناموں کی فہرست کو منظوری فراہم کرتے ہوئے نیٹ فلکس نے بھی ساڑھے سات ہزار کارکنان کو پانچ پانچ ہزار روپے کی رقم فراہم کرنے کا اعلان کیا ہے۔ اس کا فائدہ بھی کارکنان کو جلد حاصل ہونے لگے گا۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔