سعودی عرب نے کی پیغمبر اسلام صلی اللہ علیہ وسلم کے خلاف تبصروں کی سخت الفاط میں مذمت

سعودی عرب نے پیغمبر اسلامؐ کے بارے میں تبصروں کی مذمت کے ساتھ ساتھ عقائد کے احترام پر زور دیا۔

سعودی عرب، تصویر آئی اے این ایس
سعودی عرب، تصویر آئی اے این ایس
user

قومی آوازبیورو

سعودی عرب نے پیغمبر اسلام کے بارے میں نوپور شرما کے تبصرے کی مذمت کی ہے۔ شہزادہ فیصل بن فرحان السعود کی سربراہی میں سعودی عرب کی وزارت خارجہ نے عقائد اور مذاہب کے احترام پر زور دیتے ہوئے ملک کے موقف کا اعادہ کیا۔

حرمین کی جنرل پریذیڈنسی نے اس بات پر زور دیا کہ اس طرح کی گھناؤنی حرکتیں تمام مذاہب کی توہین کرتی ہیں اور جو لوگ ایسی حرکتیں کرتے ہیں وہ پیغمبرؐ کی مستند سیرت سے واقف نہیں ہیں۔ ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ "اللہ کی دعائیں اور سلامتی ہو ان پر، کیونکہ وہ زمین پر رہنے والوں میں سب سے بہتر تھے۔ انسانیت اور دنیا کے لیے ایک رحمت تھے۔"


یہ بیان مملکت سعودی عرب کا پیغام ہے کہ وہ تمام مذاہب اور عقیدوں کا احترام، سب کے درمیان امن کے پیغام کو پھیلانے اور اسلام کی علامت کے دوسرے مذاہب و عقائد کی توہین نہ کرنے کے موقف کی تصدیق کرتے ہیں۔

واضح رہے زبردست دباؤ کے بعد بی جے پی نے اتوار کو اپنی قومی ترجمان نوپور شرما کو ایک ٹی وی مباحثے کے دوران پیغمبر اسلامؐ کے تعلق سے ان کے متنازعہ ریمارکس پر معطل کر دیا۔ پارٹی نے ایک بیان بھی جاری کیا جس میں کہا گیا کہ وہ تمام مذاہب کا احترام کرتی ہے اور کسی بھی مذہبی شخصیت کی توہین کی سختی سے مذمت کرتی ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔