ہندوستانی کھلاڑیوں نے انڈر-23 ورلڈ ریسلنگ چیمپئن شپ میں 5 تمغے اپنے نام کیے

مردوں کے فری اسٹائل مقابلے میں سوربھ مدھوکر ایگاوے (57 کلوگرام) آج سیمی فائنل میں آذربائیجان کے علی عباس رضادے سے ہارنے کے بعد کانسے کے تمغے کے لیے مقابلہ کریں گے۔

علامتی تصویر
علامتی تصویر
user

یو این آئی

بلغراد: ہندوستانی خاتون پہلوان دیویا کاکران، نشا دہیا اور رادھیکا نے سربیا کے بلغراد میں جمعہ کو انڈر 23 ورلڈ ریسلنگ چیمپئن شپ کے پانچویں دن اپنے اپنے وزن کے زمرے میں کانسے کے تمغے جیتے۔ 72 کلوگرام کے زمرے میں، دو بار کی ایشیا چمپئن دیویا نے ریپ چیز راؤنڈ میں قزاقستان کی الیگزینڈرا زیتسیوا کو شکست دے کر کانسے کے تمغے کے مقابلے میں داخلہ حاصل کیا، جہاں انہوں نے امریکہ کی کائیلا مارانو کو 6-2 سے شکست دے کر کانسے کا تمغہ جیتا۔ اسی طرح رادھیکا نے بھی ریپ چیز راؤنڈ سے آگے بڑھ کر اٹلی کی ارورہ کیمپگنا کو 6-4 سے شکست دے کر کانسے کا تمغہ جیتا۔

دریں اثنا، نشا نے سیمی فائنل میں ایناستاسیا لاورینچوک سے ہارنے کے بعد کانسے کے تمغے کے لیے مقابلہ کیا، کانسے کے تمغے کے مقابلے میں اپنی حریف لاتویا کی ایلما زیڈلیری کو تکنیکی برتری کی بنیاد پر 10-0 سے شکست دی۔ اس سے پہلے جمعرات کو شیوانی پوار نے چاندی کا تمغہ جیتا تھا اور انجو نے کانسے کا تمغہ حاصل کیا تھا اور سب کو ساتھ لے کر ہندوستان نے اب مقابلے میں پانچ تمغے جیتے ہیں۔


مردوں کے فری اسٹائل مقابلے میں، سوربھ مدھوکر ایگاوے (57 کلوگرام) آج سیمی فائنل میں آذربائیجان کے علی عباس رضادے سے ہارنے کے بعد کانسے کے تمغے کے لیے مقابلہ کریں گے۔ سوربھ نے ٹورنامنٹ میں اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کیا ہے۔ انہوں نے اب تک سیمی فائنل کے علاوہ اپنے تمام حریفوں پر فتح حاصل کی ہے۔ اس کے علاوہ 16ویں راؤنڈ میں ہارنے والے پرویندر 65 کلوگرام میں اپنے حریف یونان کے جارجیوس پیلیڈس کے فائنل میں پہنچنے کے بعد ریپ چیز راؤنڈ میں حصہ لیں گے۔ دوسری جانب 97 کلوگرام میں ساحل کی مہم کوارٹر فائنل میں ہی ختم ہوگئی۔ اسے یوکرین کے ڈینیلو اسٹاسیوک کے ہاتھوں شکست ہوئی۔ نوین (70 کلوگرام) اور وکی (79 کلوگرام) بھی کوالیفکیشن راؤنڈ سے آگے بڑھنے میں ناکام رہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔