اسرو سال 2022 میں سلسلہ وار مشن کے لئے تیار: کے سیون

2022 کے منصوبوں کا اعلان کرتے ہوئے ڈاکٹر سیون نے کہا کہ اس سال ہمارے پاس بہت سے مشن ہیں جن میں انسان کے بغیر والا پہلا گگن یان مشن بھی بھی شامل ہے۔

اسرو، تصویر آئی اے این ایس
اسرو، تصویر آئی اے این ایس
user

یو این آئی

حیدرآباد: وبا کے مسلسل دوسرے سال 2021 میں قدرے خاموشی کے بعد ہندوستانی خلائی ایجنسی، سال 2022 میں سلسلہ وار مشن کی تیاری کر رہی ہے۔ خلائی ایجنسی کے سائنسدانوں کو اپنے نئے سال کے پیغام میں (اسرو) کے چیئرمین ڈاکٹر کے سیون نے کہا کہ ''پچھلے سال، ہمارے دو مشن تھے جن میں سے ایک این ایس آئی ایل کا تجارتی مشن تھا۔

ڈاکٹر سیون نے کہا کہ جی ایس ایل وی۔ ایف 10/ای او ایس مشن کرائیوجینک مرحلہ میں پیچیدگیوں کی وجہ سے ناکام رہا۔ اس کے لیے قومی سطح کی ناکامی کا تجزیہ کرنے والی کمیٹی تشکیل دی گئی۔ کمیٹی نے اصل وجہ کی نشاندہی کی اور اپنی سفارشات پیش کیں جس کے بعد متعلقہ سسٹم کے استحکام میں بہتری کے لئے ڈیزائن میں تبدیلیاں کی گئیں۔


ڈاکٹر سیون نے مزید کہا کہ جی ایس ایل وی۔ ایف 10 کو 12 اگست کو شیڈول کے مطابق 05.43 بجے سری ہری کوٹہ سے زمین کے مشاہداتی سٹلائٹ کے ساتھ چھوڑا گیا۔ اس کا پہلا اور دوسرامرحلہ معمول کے مطابق تھا تاہم کرائیوجینک اپر اسٹیج میں آتشگیری (اگنیشن) تکنیکی خرابی اور مشن کی وجہ سے ناکام ہوا۔

2022 کے منصوبوں کا اعلان کرتے ہوئے ڈاکٹر سیون نے کہا کہ اس سال ہمارے پاس بہت سے مشن ہیں جن میں انسان کے بغیر والا پہلا گگن یان مشن بھی بھی شامل ہے۔ انہوں نے کہا کہ بعض لانچنگ مشن ای او اے۔ چار، ای او ایس۔6 بھی ہیں۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔