پاکستان: رمضان میں صرف مہنگائی ہے، نہ بجلی ہے نہ کام

پاکستانی پنجاب کے مختلف شہروں میں ڈیزل کی قلت کے باعث پٹرول پمپوں پر گاڑیوں کی لمبی لمبی قطاریں لگ گئی ہیں اور اطلاعات ہیں کہ پنجاب کے کئی شہروں میں پٹرول پمپس نے ڈیزل بیچنا بند کر دیا ہے۔

بجلی، علامتی تصویر آئی اے این ایس
بجلی، علامتی تصویر آئی اے این ایس
user

قومی آوازبیورو

پاکستان میں حکومت تبدیل ضرور ہو گئی لیکن حالات بد سے بد تر ہوتے جا رہے ہیں۔ بین الاقوامی مالیاتی ادارے (آئی ایم ایف) نے پاکستان کو مزید قرض دینے کی یقین دہانی کر دی ہے لیکن ایسا محسوس ہو رہا ہے کہ پاکستان سری لنکا کی راہ پر جا رہا ہے۔

واضح رہے پاکستانی پنجاب کے مختلف شہروں میں ڈیزل کی قلت کے باعث پٹرول پمپوں پر گاڑیوں کی لمبی لمبی قطاریں لگ گئی ہیں اور اطلاعات ہیں کہ پنجاب کے کئی شہروں میں پٹرول پمپس نے ڈیزل بیچنا بند کر دیا ہے۔ پٹرول پمپ مالکان نے اس تعلق سے کہا ہے کہ پٹرولیم مصنوعات کے نرخوں میں ردوبدل کا امکان ہے، جس کی وجہ سے ڈیزل نہیں منگوایا۔ واضح رہے کسان اتحاد کا کہنا ہے کہ ڈیزل کی قلت کی وجہ سے گندم کی فصل شدید متاثر ہو رہی ہے۔


دوسری جانب پاکستان میں بجلی کی شدید قلت ہے اور یہ بحران بڑھتا ہی جا رہا ہے اب حالات یہ ہیں کہ کراچی، لاہور، راولپنڈی، پشاور، کوئٹہ اور ملتان سمیت کئی شہروں میں بجلی جانے کا کوئی وقت نہیں ہے جس کی وجہ سے لوگ ماہ رمضان میں بجلی نہ ہونے کی وجہ سے گرمی سے پریشان ہیں۔

ایک طرف ڈیزل کی قلت دوسری جانب کئی کئی گھنٹوں کی لوڈ شیڈنگ اور اس کا سیدھا اثر آنے والے عید کے تہوار پر پڑتا نظر آ رہا ہے کیونکہ رمضان میں درزی اپنے عید کے آرڈر پورا کرنے میں دشواری محسوس کر رہے ہیں اور جنریٹر چلانے کے لئے ڈیزل نہیں مل رہا اور جو مل رہا ہے وہ کافی مہنگا ہے۔ پاکستان کے مختلف علاقوں میں زبردست لوڈ شیڈنگ کی خبریں مل رہی ہیں۔ ادھر پاکستان میں ضروری اشیاء کی قیمتیں آسمان سے باتیں کر رہی ہیں اور خبر ہے کہ کراچی کے کئی یوٹیلیٹی اسٹورز میں آٹا اور سامان نہیں مل رہا ہے۔


لوگوں میں زبردست غصہ اور بے چینی نظر آ رہی ہے۔ موجودہ حکومت سب چیزوں کے لئے عمران خان کی سابقہ حکومت کو مورد الزام ٹھہرا رہی ہے اور عمران خان کی پارٹی نئی حکومت سے سوال جواب کر رہی ہے۔ اس بیچ عوام بہت پریشان ہیں اور پاکستان کے جو حالات ہیں وہ سری لنکا جیسے ہوتے نظر آ رہے ہیں۔ پٹرول پمپوں پر ڈیزل نہیں اور فیکٹریوں اور گھروں میں بجلی کی قلت، یہی سب کچھ سری لنکا میں ہو رہا ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔