برطانیہ کا ’بدترین شرارتی‘ لڑکا، 16 سال کی عمر میں 191 بار گرفتار

پولیس کے اعداد و شمار سے یہ بھی پتہ چلتا ہے کہ اسی علاقے کے ایک اور بچے کو پولیس نے 17 سال کی عمر سے پہلے 151 بار گرفتار کیا تھا۔

16 سال کی عمر میں 191 بار گرفتار
16 سال کی عمر میں 191 بار گرفتار
user

قومی آوازبیورو

لندن: برطانیہ میں ایک کم سن عادی مجرم نے بار بار جرائم کے ارتکاب کا عالمی ریکارڈ قائم کیا ہے جس پر اسے مقامی پولیس اور میڈیا میں "بدترین شرارتی" لڑکا قرار دیا گیا ہے۔ العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق 16 سالہ مجرم کی شناخت ظاہر نہیں کی گئی ہے تاہم مقامی اخبار"دی سن" کے مطابق ایک برطانوی بچے نے قانونی بلوغت کی عمر کو پہنچنے سے پہلے ہی جرائم کے ارتکاب کے سابقہ ریکارڈ توڑ ڈالے۔ ملزم کو 16 سال کی عمر میں 191 بار گرفتار کیا جا چکا ہے۔ خیال رہے کہ برطانیہ میں آئینی بلوغت کی عمر 18 سال مقرر ہے۔

اخباری رپورٹ کے مطابق کم عمر مجرم کو بار بار اس لیے رہا کیا جاتا رہا ہے کیونکہ وہ قانونی طور پر بلوغت کی عمر کو نہیں پہنچا۔ پولیس کے اعداد و شمار سے یہ بھی پتہ چلتا ہے کہ اسی علاقے کے ایک اور بچے کو پولیس نے 17 سال کی عمر سے پہلے ہی 151 بار گرفتار کیا تھا۔ یہ بھی پایا گیا ہے کہ اسی پولیس یونٹ نے دو دیگر بچوں کو بھی گرفتار کیا ہے ان میں سے ایک کو 85 بار اور دوسرے کو 65 بار گرفتار کیا گیا تھا۔


معلومات کے مطابق کینٹ کاؤنٹی میں بھی چار بچے ہیں جن میں سے ہر ایک بچے کو پچپن سے زیادہ بار مختلف جرائم کے ارتکاب کے الزام میں گرفتار کیا گیا تھا۔ ان میں ایک ایسا بچہ بھی شامل تھا جب وہ پہلی بار گرفتار ہوا تب اس کی عمر گیارہ سال تھی۔

(العربیہ ڈاٹ نیٹ)

Follow us: Facebook, Twitter, Google News

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔