یوگی حکومت کسانوں کے ساتھ ناانصافی کر رہی ہے: پرینکا گاندھی

پرینکا گاندھی نے کہا کہ حکومت کسانوں کے ساتھ انصاف کرنے کے بجائے انہیں ڈرا رہی ہے اور قومی سلامتی ایکٹ کے تحت کارروائی کی دھمکی دے رہی ہے۔

یوگی آدتیہ ناتھ اور پرینکا گاندھی، تصویر یو این آئی
یوگی آدتیہ ناتھ اور پرینکا گاندھی، تصویر یو این آئی
user

یو این آئی

نئی دہلی: اترپردیش کی انچارج اور کانگریس جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی واڈرا نے ریاستی حکومت پر دھان اگانے والے کسانوں کے ساتھ ناانصافی کا الزام لگاتے ہوئے کہا ہے کہ ان کی فصلیں نہیں خریدی جا رہی ہیں اور انہیں بھاری نقصان کے ساتھ دھان بیچنے پر مجبور کیا جا رہا ہے۔

پرینکا گاندھی نے کہا کہ حکومت کسانوں کے ساتھ انصاف کرنے کے بجائے انہیں ڈرا رہی ہے اور قومی سلامتی ایکٹ کے تحت کارروائی کی دھمکی دے رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ کم از کم امدادی قیمت کسانوں کا حق ہے اور انہیں ملنا چاہیے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ’’بی جے پی حکومت کسانوں پر این ایس اے نافذ کرے گی، کسانوں کو دھمکائے گی لیکن کسانوں کو ایم ایس پی نہیں دے گی‘‘۔


پرینکا گاندھی نے کہا کہ "اتر پردیش کے کئی اضلاع کے کسان 900-1000 روپے کوئنٹل کے نقصان پر دھان فروخت کرنے پر مجبور ہیں، جو سراسر ناانصافی ہے۔ ایم ایس پی کسانوں کا حق ہے۔ کانگریس اس حق کے لیے پوری قوت سے لڑے گی‘‘۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔