کرایہ پر لئے جانے والے ہیلی کاپٹروں کے حفاظتی معیاروں میں کوئی کوتاہی نہیں: بھوپش

بگھیل نے کہا کہ 2019 میں ڈی جی سی اے کے ذریعہ دیئے گئے لائسنس والی کمپنی ہے پھر بھی رکن کی طرف سے جس تشویش کا اظہار کیا گیا ہے اس کا جائزہ لیا جائے گا، تحفظ کے تعلق سے کوئی کوتاہی نہیں برتی جائے گی۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

یو این آئی

رائے پور: چھتیس گڑھ کے وزیر اعلی بھوپیش بگھیل نے آج ایوان کو یقین دہانی کرائی کہ نجی کمپنیوں سے کرایہ پر لئے گئے ہیلی کاپٹروں میں حفاظتی معیارات میں کوئی کوتاہی نہیں برتی جاتی ہے۔ بگھیل نے وقفہ سوال کے دوران بی جے پی کے سابق وزیراعلی ڈاکٹر رمن سنگھ کے ضمنی سوال کے جواب میں یہ جانکاری دی۔

ڈاکٹر رمن سنگھ نے کہا کہ جن چھ کمپنیوں سے حکومت ہیلی کاپٹر کرایہ پر لے رہی ہے ان میں سی جی او الیویٹر رائے پور پروپرائیٹر کمپنی ہے، یہ ایک این ایس او سی پرمٹ ہولڈر کمپنی ہے اور یہ ڈی جی سی اے کے حفاظتی ضوابط سے مطابق نہیں ہے۔


بگھیل نے کہا کہ 2019 میں ڈی جی سی اے کے ذریعہ دیئے گئے لائسنس والی کمپنی ہے پھر بھی رکن کی طرف سے جس تشویش کا اظہار کیا گیا ہے اس کا جائزہ لیا جائے گا، تحفظ کے تعلق سے کوئی کوتاہی نہیں برتی جائے گی۔ انہوں نے بتایا کہ یکم جنوری 2019 سے 31 دسمبر 19 تک 288 دن تک نجی کمپنیوں سے ہیلی کاپٹر کرایہ پر لئے گئے جس کے عوض انہیں چودہ کروڑ چالیس لاکھ چھبیس ہزار چھ سو چوراسی روپے کی ادائیگی کی گئی۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔