’سماج سدھار ابھیان‘ میں مصروف وزیر اعلیٰ نتیش سے تیجسوی نے پوچھے کچھ تلخ سوالات

بہار کے سابق نائب وزیر اعلیٰ اور اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر تیجسوی یادو جمعرات کو دہلی سے پٹنہ پہنچے اور وزیر اعلیٰ نتیش کمار کے ’سماج سدھار ابھیان‘ کو تنقید کا نشانہ بنایا۔

تصویر آئی اے این ایس
تصویر آئی اے این ایس
user

قومی آوازبیورو

بہار کے سابق نائب وزیر اعلیٰ اور اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر تیجسوی یادو جمعرات کو دہلی سے پٹنہ پہنچے اور وزیر اعلیٰ نتیش کمار کے ’سماج سدھار ابھیان‘ کو تنقید کا نشانہ بنایا۔ آر جے ڈی لیڈر نے کہا کہ سماج میں کیا کیا برائیاں ہیں، سبھی جانتے ہیں، لیکن حکومت میں جو خامیاں ہیں اسے کون دور کرے گا۔

تیجسوی نے وزیر اعلیٰ کے ذریعہ شراب بندی کو لے کر دیئے جا رہے بیانات کو بھی مضحکہ خیز قرار دیا۔ دہلی سے پٹنہ پہنچنے کے بعد پٹنہ ہوائی اڈے پر صحافیوں سے بات کرتے ہوئے تیجسوی یادو نے کہا کہ شراب بندی کو لے کر جو ’گیان‘ وزیر اعلیٰ نے دیا وہ مضحکہ خیز ہے۔ تیجسوی نے کہا کہ وزیر اعلیٰ جی کہہ رہے ہیں کہ شراب پینے سے ایڈس ہوتا ہے۔ یہ کتنا اوٹ پٹانگ بیان دے رہے ہیں۔ شراب بندی کی ذمہ داری پولیس کی ہے۔ لیکن اسمبلی احاطہ میں شراب کی بوتلیں ملتی ہیں، پھر بھی کسی پر کارروائی نہیں ہوتی۔


تیجسوی یادو کا کہنا ہے کہ وزیر اعلیٰ سبھی طرف سے گھرے ہوئے ہیں، اسی لیے اوٹ پٹانگ بیان دے رہے ہیں۔ بہار کے سابق نائب وزیر اعلیٰ نے کہا کہ کون نہیں جانتا کہ نشہ کرنا، چوری کرنا، جہیز لینا بری بات ہے۔ انھوں نے کہا کہ وزیر اعلیٰ کو سماج کی برائیاں نظر آ رہی ہیں، لیکن حکومت کی برائیاں و خامیاں نظر نہیں آ رہیں۔ ایڈمنسٹریشن میں جو بدعنوانی ہے اسے کون درست کرے گا؟ بدعنوانی، بے روزگاری، غریبی کون مٹائے گا؟ بہار کو خصوصی ریاست کا درجہ کون دلائے گا؟

تیجسوی نے طنز کے تیر چلاتے ہوئے یہاں تک کہہ دیا کہ وزیر اعلیٰ نے بہار میں اتنا کام کر دیا کہ لوگوں نے ان کی پارٹی کو تیسرے نمبر کی پارٹی بنا دیا۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔