اتر پردیش میں توڑی گئیں بھگوان بدھ اور ڈاکٹر امبیڈکر کی مورتیاں، حالات کشیدہ

لکھیم پور کھیری ضلع میں ایک پارک میں بھگوان بدھ اور ڈاکٹر بی آر امبیڈکر کی مورتیاں ٹوٹی پائی جانے کے بعد سے علاقے میں کشیدگی پھیل گئی ہے۔

تصویر آئی اے این ایس
تصویر آئی اے این ایس
user

تنویر

اتر پردیش کے لکھیم پوری کھیری ضلع واقع ایک پارک میں بھگوان بدھ اور ڈاکٹر بی. آر. امبیڈکر کی مورتیاں ٹوٹی پائی گئی ہیں جس کے بعد علاقے میں ماحول انتہائی کشیدہ ہے۔ جس پارک میں مورتیاں نصب کی گئی تھیں، اس کی دیکھ بھال کرنے والی اندرانی دیوی کے مطابق جب انھوں نے بدمعاشوں کو مورتیوں کو نقصان پہنچانے سے روکا تو انھوں نے ان کی پٹائی شروع کر دی۔

مورتیاں توڑے جانے کا واقعہ منگل کے روز انجام دیا گیا۔ مقامی لوگوں نے پولس اور ایڈمنسٹریٹو افسروں کو واقعہ کی جانکاری دی اور ملزمین کے خلاف سخت کارروائی کا مطالبہ بھی کیا۔ پولس کو اندیشہ ہے کہ یہ واقعہ اتر پردیش میں آئندہ پنچایت انتخاب سے متعلق ہو سکتا ہے۔ انھوں نے متعلقہ دفعات کے تحت ایف آئی آر درج کر جانچ شروع کر دی ہے۔

لکھیم پوری کھیری واقع حیدر آباد پولس اسٹیشن کے ایس ایچ او سنیت کمار نے میڈیا کو بتایا کہ "مورتیوں کو معمولی نقصان پہنچانے والے دونوں غنڈوں نے کیئر ٹیکر کو بھی پیٹا۔ ہم نے تعزیرات ہند کی دفعہ اور ایس سی/ایس ٹی (انسداد ظلم) ایکٹ کے تحت دفعہ 295 (کسی خاص طبقہ کے مذہب کی بے عزتی کرنے کے ارادے سے پوجا کی جگہ کو نقصان پہنچانا)، 323، 506 (مجرمانہ دھمکی)، 504 (قصداً بے عزتی) کے تحت ایف آئی آر درج کی ہے۔ کیئر ٹیکر کو معمولی چوٹیں لگی ہیں اور انھیں ڈاکٹر معائنہ کے لیے بھیجا گیا ہے۔ ملزمین کو جلد گرفتار کیا جائے گا۔"

Published: 16 Sep 2020, 6:40 PM
next