کورونا سے بے حال ہوا دنیا کا سب سے امیر مندر ’پدمنابھ سوامی‘، مدد مانگنے پر مجبور

’پدمنابھ سوامی‘ تراونکور کے شاہی کنبہ کے دیوتا ہیں، تراونکور کے مہاراجہ مولم تھرونل رام ورما مندر ٹرسٹی ہیں، کنبہ کے ایک فرد نے نام نہ شائع کرنے کی شرط پر بتایا کہ کووڈ وبا کے بعد چیزیں اچھی نہیں رہیں

پدمنابھ سوامی مندر، تصویر آئی اے این ایس
پدمنابھ سوامی مندر، تصویر آئی اے این ایس
user

قومی آوازبیورو

ترووننت پورم کے وسط میں واقع مشہور شری پدمنابھ سوامی مندر ایک لاکھ کروڑ روپے سے زیادہ کی ملکیت اور زیادہ تر سونے، چانے و ہیرے کے ساتھ دنیا کا سب سے امیر مندر ہے، لیکن حال میں ہی اس نے کیرالہ حکومت سے اپنے مالی مسائل سے نمٹنے کے لیے ایک آسان قرض کی مدد مانگی ہے۔

’پدمنابھ سوامی‘ تراونکور کے شاہی کنبہ کے نگراں دیوتا ہیں، تراونکور کے مہاراجہ مولم تھرونل رام ورما اس مندر کے ٹرسٹی ہیں۔ کنبہ کے ایک سرکردہ فرد نے نام نہ شائع کرنے کی شرط پر بتایا کہ کووڈ وبا کے بعد چیزیں اتنی اچھی نہیں ہیں۔


سرکردہ ذرائع نے کہا کہ مندر کی کمائی میں گراوٹ آئی ہے اور ریاستی حکومت کے ذریعہ 2 کروڑ روپے کی رقم منظور کی گئی ہے اور یہ ایک قرض ہے اور اسے ایک سال میں واپس دینا ہوگا۔ مندر میں مستقل اور غیر مستقل دونوں طرح کے تقریباً 200 ملازمین ہیں اور ایک بڑی تعداد میں پنشن کی ادائیگی کی جاتی ہے۔

بتایا جاتا ہے کہ مندر میں تقریباً ایک کروڑ روپے کا ماہانہ خرچ ہوتا ہے اور عام طور پر جب تک وبا نہیں آتی، تب تک مندر اہل تھا، لیکن وبا کے بعد چیزیں خراب ہو گئیں اور اس لیے مندر کو مدد کے لیے ریاستی حکومت سے رابطہ کرنا پڑا۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔