پی ایم مودی کے آنسو دیکھ سابق آئی اے ایس افسر کو یاد آئی ’بندر اور مگرمچھ‘ کی کہانی

سابق آئی اے ایس افسر سوریہ پرتاپ نے پی ایم مودی کے آنسوؤں پر طنز کے تیر چلاتے ہوئے کہا ’’بندر کا کلیجہ اور مگرمچھ کی کہانی سنی ہے نہ۔ آپ کو بندر سمجھ، پھر سے پیٹھ پر بٹھانے کے لیے ہیں یہ آنسو۔‘‘

نریندر مودی، تصویر یو این آئی
نریندر مودی، تصویر یو این آئی
user

تنویر

وزیر اعظم نریندر مودی گزشتہ دن کورونا وائرس پر ڈاکٹروں سے بات چیت کے دوران جذباتی ہو گئے تھے اور ان کی آنکھیں بھی نم ہو گئی تھیں۔ انھوں نے اس دوران کہا تھا کہ ’’اس کورونا وبا نے ہم سے ہمارے کئی اپنوں کو چھینا ہے۔‘‘ اس تعلق سے کئی طرح کی خبریں سامنے آ چکی ہیں اور اپوزیشن پارٹی لیڈروں نے ان کے آنسوؤں کو کئی طرح سے تنقید کا نشانہ بھی بنایا۔ اب ایک سابق آئی اے ایس افسر نے پی ایم مودی کے آنسوؤں پر طنز کرتے ہوئے اسے مگرمچھ کے آنسو ٹھہرانے کی کوشش کی ہے۔ دراصل پی ایم مودی کے آنسو دیکھ کر انھیں ’بندر اور مگرمچھ‘ کی کہانی یاد آ گئی اور پھر انھوں نے اس تعلق سے دو ٹوئٹ کر ڈالے۔

پی ایم مودی کے آنسوؤں پر طنز کے تیر سابق آئی اے ایس افسر سوریہ پرتاپ سنگھ نے چلائے ہیں۔ انھوں نے اپنے ٹوئٹ میں لکھا ہے کہ ’’بندر کا کلیجہ اور مگرمچھ کی کہانی سنی ہے نہ۔ آپ کو بندر سمجھ، پھر سے پیٹھ پر بٹھانے کے لیے ہیں یہ آنسو۔‘‘ ایک دیگر ٹوئٹ میں انھوں نے یہاں تک لکھ دیا کہ ’’اصل میں مگرچھ کی بی بی نے بندر کا کلیجہ لانے کی فرمائش کی تھی، یہ سوچ کر کہ جب بندر اتنی میٹھی، رسیلی جامن کھاتا ہے تو اس کا کلیجہ کتنا میٹھا ہوگا۔ آج کے حالات میں فرق صرف اتنا ہے کہ کلیجہ ’کسی اور‘ کو نہیں، خود کو چاہیے۔‘‘


سبکدوش آئی اے ایس سوریہ پرتاپ سنگھ کے اس ٹوئٹ کو لے کر سوشل میڈیا پر خوب تبصرے ہو رہے ہیں۔ ایک سوشل میڈیا یوزر نے سوریہ پرتاب کے ٹوئٹ پر کمنٹ کرتے ہوئے لکھا ہے کہ ’’2024 آتے آتے پھر سے لوگ ان کی تعریف کرنا شروع کر دیں گے اور ووٹ انھیں کو دیں گے۔‘‘ ایک دیگر یوزر نے لکھا ’’منھ میں رام بغل میں چھری، مودی جی عوام کو لوٹنے کا کوئی موقع نہیں چھوڑ رہے ہیں۔‘‘

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔