اعظم خان معاملہ کو یو این او میں اٹھانے کا فیصلہ

آر ٹی آئی کارکن دانش خان نے کہا کہ اعظم خان کے خلاف درج زیادہ تر مقدموں میں انہیں ضمانت مل چکی ہے۔ اس کے باوجود انہیں ہراساں کیا جا رہا ہے۔

سماجوادی پارٹی کے قدآور لیڈر اعظم خان / تصویر آئی اے این ایس
سماجوادی پارٹی کے قدآور لیڈر اعظم خان / تصویر آئی اے این ایس
user

یو این آئی

رامپور: سماج وادی پارٹی (ایس پی) رکن پارلیمنٹ اعظم خان کے خلاف درج مقدموں کو فرضی قرار دیتے ہوئے اسے خارج کرنے کا مطالبہ کرنے والے آر ٹی آئی کارکن اب اس معاملے کو اقوام متحدہ میں لے جانے پر غور کر رہے ہیں۔ مستقل طور سے اتراکھنڈ کے نینی تال باشندہ آر ٹی آئی کارکن دانش خان نے بدھ کو یواین آئی سے بات چیت میں کہا کہ سات جولائی کو حقوق انسانی کمیشن میں ایک عرضی داخل کی تھی جس میں انہوں نے رامپور کے ایس پی رکن پارلیمنٹ کے خلاف در ج مقدموں کو فرضی قرار دیتے ہوئے اسے انسانی حقوق کی خلاف ورزی قرار دیا تھا۔ کمیشن نے ان کی عرض کو 10 اگست کو درج کیا تھا جبکہ 16 اگست کو عرضی کو یہ کہتے ہوئے خارج کر دیا گیا تھا کہ یہ عدالت کا معاملہ ہے اس لئے اس پر غور نہیں کیا جا سکتا۔

دانش خان نے کہا کہ اعظم خان کے خلاف درج زیادہ تر مقدموں میں انہیں ضمانت مل چکی ہے۔ اس کے باوجود انہیں ہراساں کیا جا رہا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ انسانی حمیت کو دیکھتے ہوئے حقو ق انسانی کمیشن اس پر ایکشن لے۔ انہوں نے کہا کہ اپنی عرضی میں انہوں نے اعظم خان کے علاوہ ملک میں رہنے والے مذہبی اقلیتوں کے ہراسانی کی بات کہی ہے جس کے خارج ہونے کے بعد اب وہ اقوام متحدہ میں جائیں گے۔ اس سلسلے میں وہ اگلے ایک دو دن میں ای میل کے ذریعہ اپنی بات یو این او کے سامنے پیش کریں گے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔