پلوامہ تصادم: جیش محمد سے وابستہ تین ملی ٹنٹ ہلاک

ذرائع کے مطابق تلاشی آپریشن کے دوران وہاں موجود ملی ٹنٹوں نے سیکورٹی فورسز کی ایک پارٹی پر فائرنگ کی۔ جوابی فائرنگ کے ساتھ طرفین کے درمیان مسلح تصادم چھڑ گیا جو تین ملی ٹنٹوں کی ہلاکت پر ختم ہوگیا۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

یو این آئی

سری نگر: جنوبی کشمیر کے ضلع پلوامہ میں بدھ کی صبح ہونے والے ایک مسلح تصادم میں جیش محمد سے وابستہ تین ملی ٹنٹ مارے گئے ہیں۔ ملی ٹنٹ مخالف آپریشن کے دوران فوج کا ایک اہلکار بھی زخمی ہوگیا ہے۔ سرکاری ذرائع نے بتایا کہ ضلع پلوامہ کے آستان محلہ کنگن میں ملی ٹنٹوں کی موجودگی سے متعلق خفیہ اطلاع ملنے پر پلوامہ پولیس، فوج کی 53 آر آر اور 183 بٹالین سی آر پی ایف نے مذکورہ علاقے کو محاصرے میں لے کر کارڈن اینڈ سرچ آپریشن شروع کیا۔

انہوں نے کہا کہ تلاشی آپریشن کے دوران وہاں موجود ملی ٹنٹوں نے سیکورٹی فورسز کی ایک پارٹی پر فائرنگ کی۔ جوابی فائرنگ کے ساتھ ہی طرفین کے درمیان مسلح تصادم چھڑ گیا جو تین ملی ٹنٹوں کی ہلاکت پر ختم ہوگیا۔ ذرائع نے بتایا کہ تصادم کے دوران فوج کا ایک اہلکار بھی زخمی ہوا جسے علاج ومعالجہ کے لئے اسپتال میں داخل کرایا گیا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ تصادم کی جگہ سے اسلحہ و گولہ بارود برآمد کیا گیا ہے۔

پولیس سربراہ دلباغ سنگھ نے مقامی خبر رساں ایجنسی جی این ایس کو بتایا ہے کہ تصادم میں مارے گئے تینوں ملی ٹنٹوں کا تعلق جیش محمد سے ہے۔ انہوں نے مزید کہا ہے کہ مہلوک ملی ٹنٹوں کی شناخت معلوم کی جارہی ہے۔ سری نگر میں تعینات دفاعی ترجمان کے مطابق مہلوک ملی ٹنٹوں کو خود سپردگی اختیار کرنے کی پیشکش بھی کی گئی تھی جو انہوں نے ٹھکرا دی۔ انہوں نے کہا کہ مہلوک ملی ٹنٹوں کا تعلق جیش محمد سے ہے اور ان میں سے ایک آئی ای ڈی ایکسپرٹ تھا۔

اس دوران کشمیر زون پولیس نے اپنے آفیشل ٹوئٹر ہینڈل پر ایک ٹوئٹ میں کہا کہ 'کنگن پلوامہ میں تین دہشت گرد مارے گئے۔ شناخت کا عمل جاری ہے۔ ممنوعہ مواد بشمول اسلحہ و گولہ بارود برآمد کیا گیا ہے'۔ قبل ازیں منگل کو اسی ضلع کے ترال میں ملی ٹنٹوں اور سیکورٹی فورسز کے مابین ہونے والی تصادم آرائی میں دو ملی ٹنٹ مارے گئے تھے۔