پرینکا گاندھی نے کیا ایل پی جی سلنڈر کی قیمت کو لے کر حکومت پر حملہ

پرینکا گاندھی واڈرا نے کہا کہ مہنگائی میں اضافہ ہوتا جا رہا ہے۔ سلنڈر بھرانے کے لئے پیسے نہیں ہیں۔ کام دھندے بند ہیں۔ یہ عام خواتین کی تکلیف ہے۔ ان کے درد پر کب بات ہوگی۔ مہنگائی کم کرو۔

پرینکا گاندھی، تصویر @INCIndia
پرینکا گاندھی، تصویر @INCIndia
user

یو این آئی

نئی دہلی: کانگریس کی اترپردیش کی انچارج جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی واڈرا نے رسوئی گیس سلنڈر (ایل پی جی) کی قیمت میں ہو رہے مسلسل اضافہ پر حکومت پر حملہ کیا اور کہا کہ ایل پی جی سلنڈر کی قیمت میں اضافہ سے عام خواتین تکلیف میں ہیں اور حکومت کو ان کے اس درد پر توجہ دینی چاہئے۔

پرینکا گاندھی واڈرا نے کہا کہ مہنگائی میں اضافہ ہوتا جا رہا ہے۔ سلنڈر بھرانے کے لئے پیسے نہیں ہیں۔ کام دھندے بند ہیں۔ یہ عام خواتین کی تکلیف ہے۔ ان کے درد پر کب بات ہوگی۔ مہنگائی کم کرو۔ اس کے ساتھ ہی انہوں نے ایک ویڈیو بھی پوسٹ کیا ہے جس میں ایک خاتون کہہ رہی ہے کہ اس کے پاس محض ایک سلنڈر ہے لیکن اسے بھروانے کے لئے اس کے پاس پیسے نہیں ہوتے۔ چولہے پر کھانا بنانے پر کہتے ہیں کہ آلودگی بڑھ رہی ہے۔ ہم جائیں تو کہاں جائیں۔ ہر مہینے سلنڈر کی قیمت میں اضافہ ہو رہا ہے۔


اس پوسٹ کے ساتھ انہوں نے ایک نعرہ بھی لکھا ہے ’مہنگائی کی مار بس کرو اب بی جے پی حکومت‘۔ اس میں یہ بھی بتایا گیا ہے کہ 2021 میں رسوئی گیس کا سلنڈر 165 روپے مہنگا ہوا۔ یکم جنوری کو 694 روپے، چار فروری کو 719 روپے، سات فروری کو 759 روپے، 25 فروری کو 794 روپے، یکم مارچ کو 819 روپے، یکم جولائی کو 834 روپے اور 17 اگست کو 859 روپے ہوا ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔