فوجیوں کے لئے نان بلیٹ پروف گاڑیاں اور وزیر اعظم کے لئے مہنگا جہاز: راہل گاندھی

راہل گاندھی نے ایک ویڈیو شیئر کیا جس میں بتایا گیا ہے کہ ٹرک کے اندر بیٹھے کچھ فوجی آپس میں بات کر رہے ہیں۔ کہ انہیں نان بلٹ پروف گاڑی میں بھیج کر ہماری زندگیوں کے ساتھ کھلواڑ کیا جا رہا ہے۔

راہل گاندھی / تصویر بشکریہ ٹوئٹر @INCIndia
راہل گاندھی / تصویر بشکریہ ٹوئٹر @INCIndia
user

یو این آئی

نئی دہلی: کانگریس کے سابق صدر راہل گاندھی نے وزیر اعظم کے لئے جہاز خریدے جانے کے حوالہ سے وزیر اعطم مودی پر ہفتہ کو ایک بار پھر حملہ کیا اور ایک ویڈیو شیئر کر کے فوجیوں کے لئے نان بلیٹ پروف گاڑیاں اور اپنے لئے مہنگا جہاز خریدنے کا الزام لگایا۔

لداخ سرحد پر چین اور ہندوستان کے مابین تنازع پر راہل گاندھی گزشتہ کئی مہینوں سے وزیر اعظم مودی پر مستقل حملہ آور ہیں۔ کیرالہ کے وائناڈ سے رکن پارلیمنٹ راہل گاندھی نے ہفتہ کے روز اپنے ٹوئٹر پر ایک ویڈیو شیئر کیا جس میں مبینہ طور پر بتایا گیا ہے کہ ’’ٹرک کے اندر بیٹھے کچھ فوجی آپس میں بات کر رہے ہیں۔ ان میں سے ایک کا کہنا ہے کہ انہیں نان بلٹ پروف گاڑی میں بھیج کر ہماری زندگیوں کے ساتھ کھلواڑ کیا جا رہا ہے۔‘‘

راہل گاندھی نے ویڈیو کے ساتھ ٹوئٹ کیا ’’ہمارے فوجیوں کو نان بلٹ پروف ٹرکوں میں شہید ہونے کے لئے بھیجا جارہا ہے اور ہمارے وزیر اعظم کے لئے 8400 کروڑ روپے کے ہوائی جہاز! کیا یہ انصاف ہے؟‘‘

راہل گاندھی نے جمعرات کو بھی جہاز خریدنے کے لئے وزیر اعظم کو نشانہ بنایا اور کہا تھا کہ وزیر اعظم کو صرف اپنی شبیہ کی فکر ہے۔ انہوں نے کہا تھا کہ وزیر اعظم نے اپنے لئے 8400 کروڑ کا طیارہ خریدا۔ اتنے میں سیاچن-لداخ بارڈر پر تعینات ہمارے فوجی جوانوں کے لئے کتنا کچھ خریدا جاسکتا تھا۔ گرم لباس: 3000000 ، جیکٹس، دستانے: 6000000، جوتے: 6720000 آکسیجن سلنڈر: 1680000۔ وزیر اعظم کو صرف اپنی شبیہ کی فکر ہے نہ کہ فوجیوں کی۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔


next