یو پی: جنتا دل یو نے 7 اکتوبر سے انتخابی مہم شروع کرنے کا کیا اعلان، مشکل میں بی جے پی

جنتا دل یو کے دہلی واقع مرکزی دفتر کی ایک میٹنگ میں آر سی پی سنگھ کو بی جے پی سے بات چیت کے لیے مقرر کیا گیا ہے، لیکن بات اب تک نہیں بنی کیونکہ جنتا دل یو دو درجن سیٹوں پر الیکشن لڑنا چاہتی ہے۔

نتیش کمار، تصویر یو این آئی
نتیش کمار، تصویر یو این آئی
user

قومی آوازبیورو

بہار میں بی جے پی کے ساتھ مل کر حکومت چلا رہی نتیش کمار کی پارٹی جنتا دل یو نے اتر پردیش میں 7 اکتوبر سے اپنی انتخابی مہم شروع کرنے کا اعلان کر دیا ہے۔ اس دوران سابق مرکزی وزیر اوپیندر کشواہا یو پی کا دورہ کریں گے اور کئی پروگراموں میں شامل ہوں گے۔

سابق مرکزی وزیر اور جنتا دل یو پارلیمانی پارٹی کے سربراہ اوپیندر کشواہا نے بتایا کہ وہ اتر پردیش میں کشواہا سماج کے ایک جلسہ میں شامل ہوں گے جو کہ ان کا نجی پروگرام ہے۔ اس کے ساتھ ہی ریاست کے کئی اضلاع کا دورہ کریں گے۔ انھوں نے بتایا کہ اس دوران وہ این ڈی اے کی تمام چھوٹی پارٹیوں سے رابطہ کریں گے۔ حالانکہ انھوں نے یہ بھی صاف کیا کہ اگر جنتا دل یو اور بی جے پی کا اتحاد نہیں ہو پایا تو پارٹی تنہا یا این ڈی اے کی چھوٹی پارٹیوں کے ساتھ اتحاد کر کے بھی الیکشن لڑ سکتی ہے۔


غور طلب ہے کہ جھارکھنڈ کی جے ایم ایم پہلے ہی صاف کر چکی ہے کہ پارٹی جنتا دل یو کے ساتھ اتحاد کر کے انتخاب لڑے گی۔ اس سے قبل جنتا دل یو کے دہلی واقع مرکزی دفتر کی ایک میٹنگ میں آر سی پی سنگھ کو بی جے پی سے بات چیت کے لیے مقرر کیا گیا تھا۔ اس میٹنگ میں قومی صدر للن سنگھ، مرکزی وزیر آر سی پی سنگھ اور قومی پرنسپل جنرل سکریٹری کے سی تیاگی موجود تھے۔ میٹنگ میں یو پی اسمبلی انتخابات پر بات چیت ہوئی۔ ذرائع کے مطابق یو پی میں تقریباً دو درجن سیٹوں پر جنتا دل یو انتخاب لڑنا چاہتی ہے۔ حالانکہ ابھی اسکریننگ کا عمل پارٹی نے شروع نہیں کیا ہے۔

اس سے قبل گزشتہ منگل کو جنتا دل یو نے قومی عہدیداروں کی نئی فہرست بھی جاری کی تھی۔ قومی سربراہ سمیت اس میں کل 18 عہدیداروں کو شامل کیا گیا ہے۔ حالانکہ اس کے پہلے قومی عہدیداروں کی فہرست میں صرف 16 لوگ ہی شامل تھے۔ اس طرح نئی فہرست میں دو عہدیداروں کا اضافہ ہوا ہے۔ فہرست کے مطابق سابق رکن پارلیمنٹ کے سی تیاگی پارٹی کے پرنسپل جنرل سکریٹری عہدہ پر اب بھی بنے ہوئے ہیں۔


اوپیندر کشواہا پارلیمانی بورڈ کے سربراہ کی شکل میں کام کرتے رہیں گے۔ پارٹی کے قومی سربراہ راجیو رنجن سنگھ عرف للن سنگھ نے جن تین نئے ناموں کو عہدیداروں کی فہرست میں شامل کیا ہے ان میں دو جنرل سکریٹری محمد علی اشرف فاطمی اور ہرش وردھن ہیں۔ ساتھ ہی تیسرا نام پارٹی کے سابق ریاستی ترجمان راجیو رنجن پرساد کا ہے، جن کو پارٹی نے قومی سکریٹری بنایا ہے۔ رکن پارلیمنٹ آلوک کمار سمن کو پارٹی نے خزانچی بنایا ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔