برطانیہ کے خلاف ہندوستان نے اٹھایا سخت قدم، برٹش شہریوں کو بھی رہنا ہوگا 10 دن کوارنٹائن!

برطانیہ میں کووی شیلڈ کو تسلیم نہ کئے جانے کے پیش نظر حکومت ہند نے ’مساوی سلوک‘ کی حکمت عملی اختیار کرتے ہوئے ہندوستان آنے والے برٹش شہریوں پر اسی طرح کا قانون نافذ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

پی ایم مودی، تصویر یو این آئی
پی ایم مودی، تصویر یو این آئی
user

قومی آوازبیورو

حکومت ہند نے برطانیہ کے ذریعہ ہندوستانی شہریوں کے ساتھ کیے جا رہے سلوک پر اب ’جیسے کو تیسا‘ پالیسی اختیار کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ یعنی اب برطانیہ کے شہریوں کے لیے بھی ہندوستان نے یہ ضابطہ تیار کیا ہے کہ انھیں ہندوستان میں 10 دن کا کوارنٹائن کرنا ہوگا۔ ذرائع کے حوالے سے آ رہی خبروں کے مطابق حکومت ہند برطانیہ کے شہریوں کی ہندوستان آمد کو لے کر کچھ ضروری گائیڈ لائنس جاری کرنے جا رہی ہے۔ یہ گائیڈ لائنس 4 اکتوبر سے نافذ ہوں گے۔ یہ گائیڈ لائن سبھی برطانوی شہریوں اور برطانیہ سے ہندوستان آنے والے لوگوں پر نافذ ہوگا۔ 4 اکتوبر سے سبھی شہریوں کو ہندوستان پہنچنے پر اپنی ٹیکہ کاری رپورٹ تو دکھانی ہی ہوگی، ساتھ ہی کچھ اہم ضابطوں پر عمل بھی کرنا ہوگا۔

دراصل حکومت برطانیہ کے ذریعہ کووڈ کی ہندوستان میں تیار ویکسین کووی شیلڈ کو تسلیم نہ کئے جانے کے پیش نظر حکومت نے ’مساوی سلوک‘ کی حکمت عملی اختیار کرتے ہوئے ہندوستان آنے والے برٹش شہریوں پر اسی طرح کے قانون نافذ کرنے کا فیصلہ کیا ہے جیسے برطانیہ جانے والے ہندوستانی شہریوں پر نافذ ہیں۔


ذرائع کا کہنا ہے کہ برٹش شہریوں کو سفر شروع کرنے سے پہلے 72 گھنٹوں کے اندر آرٹی پی سی آر ٹیسٹ کرانا ہوگا، پھر ہندوستان کے ہوائی اڈے پر اترتے ہی دوبارہ آرٹی پی سی آر ٹیسٹ کرانا ہوگا، اور آمد کے آٹھ روز بعد تیسری بار آرٹی پی سی آرٹیسٹ کرانا ہوگا۔ یہ بھی بتایا جا رہا ہے کہ برطانیہ کے شہریوں کو ہندوستان آمد کے فوری بعد گھر یا منزل کے مقام پر 10 روز تک لازمی طورسے کوارنٹائن میں رہنا ہوگا۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔