’دہلی میں کسانوں کی ٹریکٹر پریڈ کے دوران پیش آئے واقعات بی جے پی کی سازش‘

پوتر کار نے الزام لگایا کہ اس کے پیچھے بی جے پی سے متعلق کسان مزدور مورچہ کا منصوبہ تھا۔ یہ تحریک کو بدنام کرنے کے لئے ایک جان بوجھ کر کی گئی کارروائی تھی۔

کسان ٹریکٹر پریڈ / UNI
کسان ٹریکٹر پریڈ / UNI
user

یو این آئی

اگرتلا: آل انڈیا کسان سبھا کی تریپورہ اکائی نے یوم جمہوریہ کے موقع پر کسانوں کی ٹریکٹر پریڈ کے دوران لال قلعہ میں ہوئے واقعہ کو بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جےپی) کی سازش قرار دیا ہے اور اسے کسانوں کی تحریک کو بدنام کرنے کے لئے کی گئی کارروائی بتایا ہے۔

کسان سبھا کے ریاستی سربراہ اور مارکسی کمیونسٹ پارٹی کے رہنما پوتر کار نے نامہ نگاروں سے بات چیت کے دوران ہفتے کو دعوی کیا کہ کسانوں کی تحریک پرامن طریقے سے چل رہی تھی۔ انہوں نے الزام لگایا کہ یہ صرف بی جے پی اور اس کی اہم تنظیم کسان مزدور مورچہ کے ذریعہ تحریک کو ختم کرنے کے لئے کی گئی سازش ہے۔


پوتر کار نے کہا کہ ہم ٹیکری بارڈر سے روہتک تک گئے تھے۔ اس دوران میلوں تک سڑکیں ٹریکٹروں سے بھری تھیں اور لوگ یوم جمہوریہ کی پریڈ کے لئے کافی پرجوش تھے۔ انہوں نے کہا کہ لوگوں کا جوش حیرت انگیز تھا، لیکن آخر میں سازش کی وجہ سے سب کچھ تباہ ہوگیا۔ انہوں نے الزام لگایا، ’’اس کے پیچھے بی جے پی سے متعلق کسان مزدور مورچہ کا منصوبہ تھا۔ یہ تحریک کو بدنام کرنے کے لئے ایک جان بوجھ کر کی گئی کارروائی تھی۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔