ہیمنت سورین کو فی الحال راحت نہیں، عدالت نے ای ڈی کو جواب داخل کرنے کے لیے مزید وقت دیا

سابق وزیر اعلیٰ کی درخواست پر عدالت نے 9 فروری کو ای ڈ ی سے جواب داخل کرنے کے لیے کہا تھا لیکن ایجنسی نے عدالت سے مزید وقت طلب کیا اور عدالت نے اسے منظور کر لیا۔

<div class="paragraphs"><p>ہیمنت سورین / آئی اے این ایس</p></div>

ہیمنت سورین / آئی اے این ایس

user

آئی اے این ایس

رانچی: ای ڈی کی کارروائی اور اپنی گرفتاری کو چیلنج کرنے والی سابق وزیر اعلیٰ ہیمنت سورین کی درخواست پر پیر (12 فروری) کو جھارکھنڈ ہائی کورٹ میں سماعت ہوئی، لیکن فی الحال سابق وزیر اعلیٰ کو کوئی راحت نہیں مل سکی ہے۔ ای ڈی نے اس معاملے میں اپنا جواب داخل کرنے کے لیے عدالت سے وقت مانگا جسے عدالت نے منظور کر لیا۔ آئندہ سماعت اب 27 فروری کو ہوگی۔

اس سے قبل 5 فروری کو سابق وزیر اعلیٰ ہیمنت سورین کی درخواست پر سماعت کرتے ہوئے ہائی کورٹ کے کار گزار چیف جسٹس ایس چندر شیکھر اور جسٹس انوبھا راوت چودھری کی بنچ نے ای ڈی سے 9 فروری تک اپنا جواب داخل کرنے کا حکم دیا تھا۔ لیکن ای ڈی عدالت کے دیے ہوئے وقت میں اپنا جواب داخل کرنے میں ناکام رہی۔


واضح رہے کہ سابق وزیر اعلیٰ نے اپنی درخواست میں کہا ہے کہ ای ڈی نے ان کے خلاف جھوٹے الزامات کے تحت مقدمہ درج کیا ہے۔ ان کی گرفتاری کے پیچھے کوئی ٹھوس بنیاد نہیں ہے۔ زمین گھوٹالے میں تقریباً آٹھ گھنٹے کی پوچھ گچھ کے بعد ایجنسی نے 31 جنوری کو سورین کو گرفتار کیا تھا۔ فی الحال وہ ایجنسی کے ریمانڈ پر ہیں۔ قابل ذکر ہے کہ سورین نے ای ڈی کی کارروائی کے خلاف 31 جنوری کو سپریم کورٹ میں ایس ایل پی بھی دائر کی تھی، لیکن جسٹس سنجیو کھنہ اور جسٹس بیلا ایم ترویدی کی بنچ نے ہیمنت سورین کو پہلے جھارکھنڈ ہائی کورٹ سے رجوع ہونے کے لیے کہا تھا۔

Follow us: Facebook, Twitter, Google News

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔


;