گجرات: کووڈ اسپتال کے ’آئی سی یو‘ میں آگ لگنے کا واقعہ، 5 مریض ہلاک

گجرات کے ایک کووڈ ہسپتال کے آئی سی یو میں جمعرات کو دیر رات گئے شدید آگ پھیل گئی جس میں جھلس جانے کی وجہ سے کورونا کے پانچ مریضوں کی موت واقع ہوئی

تصویر بشکریہ ٹوئٹر @ourvadodara
تصویر بشکریہ ٹوئٹر @ourvadodara
user

قومی آوازبیورو

راجکوٹ: گجرات کے راجکوٹ ضلع کے ایک کووڈ ہسپتال میں جمعرات کو دیر رات گئے آگ لگ جانے سے پانچ مریضوں کی جھلس کر موت ہو گئی۔ حدثہ میں مزید ایک کورونا مریض کی حالت نازک بتائی جا رہی ہے۔ تاحال آگ لگنے کی وجوہات معلوم نہیں ہو سکی ہیں، تاہم خیال ہے کہ طبی آلات میں شارٹ سرکٹ ہونے کی وجہ سے آگ لگی ہوگی۔

راجکوٹ شہر کے آنند بنگلا چوراہے کے پاس جس ادے شوانند کووڈ ہسپتال کے آئی سی یو وارڈ میں جمعرات کو رات کے تقریباً دو بجے آگ لگی، اس میں کورونا کے 33 مریض زیر علاج تھے۔ بچائے گئے مریضوں کو دوسرے ہسپتال میں منتقل کیا گیا ہے۔

اس حادثہ میں جان گنوانے والے مریضوں کے نام رام سنگھ بھائی، نتن بھائی بدانی، سکلال اگراوت، سنجے راٹھور اور کیشو بھائی اکبری ہیں۔ خیال رہے کہ ادے شیوانند ہسپتال کو ستمبر میں کووڈ کے مرکز کے طور پر منظوری دی گئی تھی۔ گجرات کے کسی ہسپتال میں اگست سے اب تک آگ لگنے کا یہ چوتھا واقعہ ہے۔

ضلع کے کمشنر منوج اگروال نے بتایا کہ حادثہ کی اطلاع ملنے کے بعد وزیر اعلیٰ وجے روپانی مسلسل ان کے رابطہ میں ہیں۔ انہوں نے کہا کہ حادثہ کا جو بھی ذمہ دار ہوگا اس پر کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔

ہسپتال کے طبی عملہ نے بتایا کہ جمعرات کی رات دوسری منزل پر واقعہ آئی سی یو وارڈ میں اچانک دھنوے کا غبار اٹھکنے لگا۔ اس کے بعد ڈاکٹروں اور تمام طبی اہلکار میں بھگدڑ مچ گئی۔ انہوں نے بتایا کہ مریضوں کو کھڑکیاں اور شیشے توڑ کر محفوظ نکالا گیا۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔


پسندیدہ ترین
next