بہار میں تبدیلی کے لئےعظیم اتحاد کی جیت ضروری: سونیا گاندھی

سونیا گاندھی نے کہا کہ بہار کے نوجوانوں کے پاس صلاحیت، ہنر، طاقت اور نئے بہار کی تعمیر کی طاقت ہے لیکن بے روزگاری، منتقلی، مہنگائی، بھکمری نے انہیں آنکھوں میں آنسوں اور پیروں میں چھالے دیئے ہیں۔

کانگریس صدر سونیا گاندھی
کانگریس صدر سونیا گاندھی
user

یو این آئی

نئی دہلی: کانگریس صدر سونیا گاندھی نے بہار اسمبلی انتخابات میں تبدیلی کو ضروری بتاتے ہوئے ریاست میں تبدیلی لانے کے لئے عوام سے عظیم اتحاد کو اقتدار سونپنے کی اپیل کی ہے۔ سونیا گاندھی نے منگل کو بہار کے عوام کے نام یہاں جاری ایک ویڈیو پیغام میں کہا کہ بہار حکومت اپنے مقصد سے بھٹک گئی ہے جس سے مزدور، کسان اور نوجوان مایوس ہیں۔ معیشت نازک ہونے کی وجہ سے ریاست کے دلت اور مہادلت بدحالی کی کگار پر پہنچ گئے ہیں۔

کانگریس نے عظیم اتحاد کو بہار کے عوام کی پکار اور آواز قرار دیتے ہوئے دہلی اور بہار کی حکومت کو انہوں نے ’بندی حکومتیں‘ بتایا اور کہا کہ یہ حکومت عوام کو نوٹ بندی، تالا بندی، تجارت بندی، اقتصادی بندی، کھیت کھلیان بندی، روٹی روزگار بندی کے سوا کچھ نہیں دے رہی ہے، اس لئے اس الیکشن میں بہار میں تبدیلی ضروری ہوگئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ’’بہار کی اس بندی حکومت کے خلاف- اگلی نسل اور اگلی فصل کے لئے، ایک نئے بہار کی تعمیر کے لئے، بہار کے عوام تیار ہیں۔ اب تبدیلی کی بیار ہے۔ کیونکہ تبدیلی میں جوش ہے، توانائی ہے، نئی سوچ ہے اور طاقت ہے۔ اب نئی عبارت لکھنے کا وقت آگیا ہے۔

سونیا گاندھی نے کہا کہ بہار کے نوجوانوں کے پاس صلاحیت، ہنر، طاقت اور نئے بہار کی تعمیر کی طاقت ہے لیکن بے روزگاری، منتقلی، مہنگائی، بھکمری نے انہیں آنکھوں میں آنسوں اور پیروں میں چھالے دیئے ہیں۔ بہار ہندوستان کی شان اور وقار ہے اور یہان کے کسان، نوجوان، مزدور پورے ہندوستان میں ہی نہیں دنیا بھر میں موجود ہیں۔ انہوں نے کہا کہ بہار حکومت ریاست کے ان نوجوانوں کے ہنر کے مطابق پالیسی نہیں بنا سکی، اس لئے آج بہار کا ہر گاؤں، قصبہ، شہر کھیت اور کھلیان اپنی شان اور مستقبل کے لئے تبدیلی کو تیار ہیں اور اس بار اسمبلی انتخابات میں تبدیلی کی فضا چل رہی ہے۔

کانگریس صدر نے کہا، کہ ’’اس بار اسمبلی انتخابات کئی سوالوں کے سلسلے میں کھڑا ہے۔ اس بار سوال بے روزگاری کا ہے۔ سوال کھیتی بچانے کا ہے۔ سوال روٹی اور روزگار، تعلیم اور صحت کا ہے۔ سوال صنعت اور دھندے کا ہے۔ سوال بے لگام جرائم پر روک لگانے کا ہے، سوال آمریت پسند حکومت کا ہے۔‘‘ انہوں نے کہا کہ بہار کے لئے یہ وقت اندھیرے سے اجالے کی طرف، جھوٹ سے سچ کی طرف اور حال سے مستقبل کی طرف بڑھنے کا ہے۔ انہوں نے کہا، ’’علم کی زمین کہے جانے والے بہار کے عوام سے میری اپیل ہے کہ وہ عظیم اتحاد کے امیدواروں کو ووٹ دیں اور نئے بہار کی تعمیر کریں۔‘‘

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔