کیا آپ کے پاس آیا دہلی کے وزیر اعلیٰ اروند کیجریوال کا فون؟

دہلی کے باشندوں کے پاس اروند کیجریوال کا فون جا رہا ہے جس میں وہ کہہ رہے ہیں کہ "دہلی کے لوگ حلف لیں، جب بھی گھر سے باہر جائیں تو ماسک پہنیں اور سوشل ڈسٹنسنگ کی پیروی کریں۔"

اروند کیجریوال، تصویر عآپ
اروند کیجریوال، تصویر عآپ
user

قومی آوازبیورو

دہلی کے وزیر اعلی اروند کیجریوال کورونا سے بچنے کے لئے دہلی کے عوام کو فون کالز اور دوسرے میڈیا کے ذریعے لگاتار آگاہ کر رہے ہیں۔ کئی لوگوں کے پاس اروند کیجریوال کا فون پہنچ بھی چکا ہے جس میں وہ کورونا کے خلاف پوری قوت کے ساتھ جنگ لڑنے کے عزم کا اظہار کر رہے ہیں۔ بتایا جاتا ہے کہ وزیراعلیٰ کا فون دہلی کے ایک کروڑ عوام تک جائے گا۔ اسی کے ساتھ ہی، وہ لوگوں کو کورونا سے بچنے اور احتیاطی تدابیر اختیار کرنے کے لئے ریڈیو، ٹی وی، آؤٹ ڈور ہورڈنگز، آن لائن مواصلات میڈیا کے ذریعے پیغام دیں گے۔

دراصل وزیر اعلی اروند کیجریوال مستقل طور پر کہتے رہے ہیں کہ دہلی میں کورونا کی حالت قابو میں ہے لیکن کچھ لوگوں کی دوہری جانچ اور غفلت کی وجہ سے گزشتہ دنوں کورونا کیسز میں اضافہ ہوا ہے۔ جس کے بعد وزیراعلیٰ نے عوام کو براہ راست پیغام دینے کا فیصلہ کیا ہے۔ فون کے ذریعہ پہنچائے جانے والے اس پیغام میں وہ کہتے ہوئے سنائی دے رہے ہیں کہ "دہلی کے دو کروڑ عوام نے مل کر کورونا کی لڑائی میں دہلی ماڈل قائم کیا ہے۔ جس پر پوری دنیا میں بحث کی جارہی ہے۔"

وزیر اعلی اروند کیجریوال چاہتے ہیں کہ دہلی ماڈل کورونا سے لڑنے کے لئے ایک مثال بن جائے۔ وہ اس میں کسی قسم کی کوتاہی نہیں چاہتے۔ یہی وجہ ہے کہ انہوں نے براہ راست مواصلات کے قیام کے لئے اس بیداری مہم کا آغاز کیا ہے۔ وزیر اعلی اروند کیجریوال اپنے پیغام میں یہ کہتے ہوئے سنائی دے رہے ہیں کہ "کووڈ-19 کے بارے میں کچھ لوگ لاپروا ہوگئے ہیں۔ گھر سے نکلتے وقت ماسک نہیں پہن رہے ہیں اور نہ ہی وہ معاشرتی دوری کی پیروی کررہے ہیں۔ کچھ لوگ تو کووڈ ٹیسٹ بھی نہیں کروا رہے ہیں، جبکہ دہلی حکومت یہ ٹیسٹ مفت کر رہی ہے۔" ساتھ ہی سی ایم کیجریوال دہلی کے لوگوں سے حلف لینے کی اپیل کرتے ہیں کہ "اب جب بھی گھر سے باہر جائیں تو ماسک پہنیں اور معاشرتی فاصلے کا خیال رکھیں۔"

اروند کیجریوال کی یہ اپیل فون کال ، ایف ایم اور دوسرے میڈیا کے ذریعہ نشر کی جارہی ہے تاکہ دہلی کے باشندے کورونا انفیکشن سے بچاؤ کے بارے میں آگاہ ہوسکیں۔ وزیراعلیٰ کا فون دہلی کے تمام لوگوں تک پہنچ رہا ہے۔ وزیر اعلی اروند کیجریوال نے اپنے پیغام میں کہا کہ دہلی کے تمام 2 کروڑ عوام نے مل کر کورونا کو بڑی مشکل سے کنٹرول کیا ہے۔ اب ہمیں کسی بھی حالت میں اس کو بڑھنے نہیں دینا ہے۔ پچھلے کچھ دن سے ہم تھوڑا لاپرواہ ہوگئے ہیں۔ ماسک نہیں پہنتے، معاشرتی دوری کا بھی خیال نہیں کر رہے ہیں۔

کیجریوال نے فون کال کے دوران مزید کہا کہ "میں آپ کا بھائی، آپ کا بیٹا ہوں، آپ نے مجھے اپنے کنبے کا حصہ سمجھا ہے۔ میں اپنے کنبے میں کوئی بیماری نہیں چاہتا۔ یہ ایک بہت ہی خطرناک بیماری ہے۔ تو آج میں آپ سے کچھ مانگ رہا ہوں۔ قسم کھائیں کہ جب بھی آپ گھر سے باہر نکلیں ماسک ضرور پہنیں گے، آپ معاشرتی دوری کی پیروی کریں گے۔"

وزیر اعلی اروند کیجریوال نے مزید کہا کہ آج کل کچھ لوگوں ٹیسٹ بھی نہیں کرا رہے ہیں۔ مجھے کسی کام کے لئے ایک شخص کا فون آیا۔ ان سے بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ انھیں کچھ دنوں سے خوف لاحق ہے۔ میں نے پوچھا، ٹیسٹ کرایا۔ اس نے کہا نہیں۔ میں نے پوچھا کیوں؟ تو کہتے ہیں کہ آج کل سب کچھ خود ہی ٹھیک ہوجاتا ہے، میں بھی خود ہی ٹھیک ہوجاؤں گا۔ مطلب؟ یہ بات ہوئی؟ میں دنگ رہ گیا۔ آپ جانتے ہو، اس طرح سے وہ اپنی جان کو خطرہ میں ڈال رہے ہیں اور اپنے ارد گرد کے لوگوں اور اپنے کنبہ کے لوگوں کو بھی کورونا کردیں گے۔ ٹیسٹ کروانے میں کیا حرج ہے؟ دہلی حکومت نے یہ ٹیسٹ مفت کرایا ہے۔ دہلی میں جگہ جگہ ٹیسٹ کیا جارہا ہے۔ تو پھر کیوں ٹیسٹ نہیں کراتے؟ اگر آپ کو کوئی سمٹم ہو یا آپ کسی ایسے شخص کے ساتھ رابطے میں آئے ہیں جسے کورونا ہے، تو فوری طور پر بغیر کسی تاخیر کے جانچ کرانے جائیں۔

next