’کسان کنبوں میں ماتم، اور لکھنؤ میں منایا جا رہا جشن‘، زیر حراست دیپیندر ہڈا کا بیان

وزیر اعظم مودی کے لکھنؤ دورہ کو لے کر کانگریس لیڈر دیپیندر ہڈا نے طنز کسا ہے، انھوں نے کہا کہ ’’کسان کنبوں میں ماتم چھایا ہوا ہے اور لکھنؤ میں جشن منایا جا رہا ہے۔‘‘

پی ایم مودی اور دیپیندر ہڈا، تصویر یو این آئی
پی ایم مودی اور دیپیندر ہڈا، تصویر یو این آئی
user

قومی آوازبیورو

لکھیم پور تشدد میں ہلاک کسانوں کے کنبہ سے ملنے جا رہے پرینکا گاندھی اور دیپیندر ہڈا گزشتہ 36 گھنٹے سے پولیس حراست میں ہیں۔ رکن پارلیمنٹ دیپیندر ہڈا نے اب ٹوئٹ کر مودی حکومت پر حملہ کیا ہے۔ دیپیندر ہڈا نے کہا ہے کہ کسانوں کو بے رحمی سے کچلنے والے ’آزاد‘ ہیں اور ہم 36 گھنٹوں سے پولیس ’حراست‘ میں ہیں۔

پی ایم مودی کے لکھنؤ دورے کو لے کر بھی دیپیندر ہڈا نے طنز کسا ہے۔ انھوں نے کہا ہے کہ کسان کنبوں میں ’ماتم‘ چھایا ہوا ہے اور لکھنؤ میں ’اُتسو‘ (جشن) منایا جا رہا ہے۔ دیپیندر ہڈا نے کہا ہے کہ میں ملک کے باشندوں سے پوچھتا ہوں، آپ کچلنے والوں کا ساتھ دیں گے یا کچلے جانے والے کے لیے لڑیں گے۔ پولیس لائن سیتا پور سے۔


واضح رہے کہ اتوار دیر رات کو لکھیم پور میں کسانوں کے اہل خانہ سے ملنے جا رہے پرینکا گاندھی اور دیپیندر ہڈا کو پولیس نے حراست میں لے لیا تھا۔ اس دوران پولیس کے ساتھ کانگریس لیڈروں کی نوک جھونک بھی دیکھنے کو ملی تھی۔ پولیس جبراً دیپیندر ہڈا کو گاڑی میں بٹھاتے ہوئے نظر آئی۔ اس کی مخالفت پرینکا گاندھی نے بھی کی تھی۔ فی الحال 36 گھنٹے بعد بھی دونوں لیڈر پولیس کی حراست میں ہیں۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔