یاس طوفان ساحل سمندر سے ٹکرایا، مشرقی مدنی پور میں بڑے پیمانے پر تباہی، ممتا بنرجی نے کی مانیٹرنگ

وزیر اعلی نے کہا کہ مشرقی مدنی پور میں 51 ڈیموں کو نقصان پہنچا ہے، مشرقی مدنی پور سے اب تک 3.6 لاکھ افراد کو نکالا جا چکا ہے۔

یاس طوفان کا بنگال پر اثر / یو این آئی
یاس طوفان کا بنگال پر اثر / یو این آئی
user

یو این آئی

کلکتہ: خلیج بنگال میں پیدا پونے والے ’’یاس طوفان‘‘ نے اوڈیشہ کے بالاسور کے ساحل سے صبح 9.15 بجے ٹکرانا شروع کیا اور اس کے بعد اس نے بنگال کی جانب پیش قدمی کی۔ وزیر اعلی ممتا بنرجی جنہوں نے پوری رات ریاستی سکریٹریٹ نوبنو کے کنٹرول روم میں بیٹھ کر مورچہ سنبھالے ہوئے ہیں، انہوں نے کہا کہ مشرقی مدنی پورمیں صورت حال بہت ہی خراب ہے، وہاں بڑے پیمانے پر تباہی ہوئی ہے۔

ممتا بنرجی نے کہا کہ بنگال میں سیلاب کی صورتحال بے حد خراب ہے۔ ہم مجموعی طور پر 15 لاکھ افراد کو نکالنے میں کامیاب ہوگئے ہیں۔ بہت سارے علاقے سیلاب کے پانی میں غرق ہو رہے ہیں۔ جو پانی آپ دیکھ رہے ہیں وہ خوفناک ہے۔ کم سے کم 30 ہزار مکانات تباہ ہوچکے ہیں، حالات پر میری پوری نگاہ ہے۔

یاس طوفان ساحل سمندر سے ٹکرایا، مشرقی مدنی پور میں بڑے پیمانے پر تباہی، ممتا بنرجی نے کی مانیٹرنگ

وزیر اعلی نے کہا کہ مشرقی مدنی پور میں 51 ڈیموں کو نقصان پہنچا ہے، مشرقی مدنی پور سے اب تک 3.6 لاکھ افراد کو نکالا جا چکا ہے۔ ضرورت پڑنے پر فوجی دستے تعینات کیے جائیں گے۔ ممتا بنرجی کی رپورٹ کے مطابق ساحلی علاقے میں 60 کلومیٹر تک کے پشتے تباہ ہوگئے ہیں۔ بہت سے ڈیم ٹوٹ چکے ہیں۔ یہاں تک کہ نندی گرام بھی سیلاب کی زد میں آگیا ہے۔

ممتا بنرجی نے کہا کہ ان کی حکومت اور سرکاری عملہ شہریوں کی خدمات کے لے مستعد ہیں۔ وہ خود ہی مشرقی مدنی پور ضلع حکام کے ساتھ رابطے میں ہیں۔ ممتا بنرجی نے کہا کہ یہ تباہی 6 سے 7 گھنٹے تک جاری رہے گی۔ ادھر، یاس کا لینڈ فال شروع ہوچکا ہے۔ صبح سوا نو بجے سے طوفان یاس نے بالشور میں دھامرا بندرگاہ کے قریب زوردار گولہ باری شروع کر دی۔ اگلے 3 گھنٹوں تک لینڈ لینڈ کا عمل جاری رہے گا۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔