اسپیک اَپ انڈیا: سونیا نے کہا ’ایسے حالات اور حکومت کی ایسی بے رخی کبھی نہیں دیکھی‘

سونیا گاندھی نے مزدوروں کے مسائل کو لے کر ایک بار پھر مودی حکومت کو تنقید کا نشانہ بنایا۔ اسپیک اَپ انڈیا مہم کی شروعات کرتے ہوئے سونیا نے کہا کہ آزادی کے بعد ملک میں پہلی بار ایسا منظر دیکھنے کو ملا۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

قومی آوازبیورو

کانگریس صدر سونیا گاندھی نے مزدوروں کے مسائل کو لے کر ایک بار پھر سے مودی حکومت کو تنقید کا نشانہ بنایا ہے۔ اسپیک اَپ انڈیا مہم کی شروعات کرتے ہوئے کانگریس صدر سونیا گندھی نے کہا کہ ملک کی آزادی کے بعد پہلی مرتبہ اس طرح کے درد کا منظر دیکھنے کو مل رہا ہے۔ مزدور ننگے پاؤں سینکڑوں-ہزاروں کلو میٹر پیدل چل کر جانے کو مجبور ہوئے۔ مزدوروں کی سسکیاں سب نے سنیں لیکن حکومت نے نہیں۔ مرکزی حکومت سے گزارش ہے کہ خزانہ کا تالہ کھولیے، ضرورت مندوں کو راحت دیجیے۔ ہر غریب فیملی کو 7500 روپے ہر مہینے 6 ماہ تک کے لیے دیجیے اور ان میں سے 10 ہزار روپے کی ادائیگی فوراً ہو۔ ساتھ ہی مہاجر مزدوروں کو محفوظ گھر پہنچائیے۔

سونیا گاندھی نے کہا کہ مرکزی حکومت منریگا کے تحت ہر مزدور کے لیے کم از کم 200 دن کام یقینی بنائے۔ انھوں نے کہا کہ ہندوستان گزشتہ دو مہینے سے کورونا وبا کے چیلنج اور لاک ڈاؤن سے نبرد آزما رہا ہے۔ لاکھوں مزدور ننگے پاؤں، بھوکے سینکڑوں کلو میٹر پیدل جانے کو مجبور ہو گئے۔ سب نے ان کا درد سمجھا لیکن حکومت ان کی سننے کو تیار نہیں ہے۔ انھوں نے مزید کہا کہ پہلے دن سے ہی کانگریس کے ساتھیوں، ماہرین معیشت و سماجیات اور سرکردہ شخصیتوں نے کہا کہ یہ وقت آگے بڑھ کر سب کی مدد کرنے کا ہے۔ نہ جانے کیوں حکومت یہ بات سمجھنے اور مدد کرنے سے انکار کر رہی ہے۔ سونیا گاندھی نے کہا کہ ایسے وقت میں ہندوستان کی آواز بلند کرنے کے لیے اسپیک اَپ انڈیا جیسی سماجی مہم چلانا بہت اہم ہے۔

اپنی بات آگے بڑھاتے ہوئے سونیا گاندھی نے مرکزی حکومت سے کہا کہ مزدورں کی سیکورٹی اور مفت سفر کا انتظام کر انھیں حفاظت کے ساتھ گھر پہنچائیں اور کھانا دستیاب کرایا جائے۔ اسمال اور مائیکرو کاروباروں کو قرض دینے کی جگہ معاشی مدد دیجیے تاکہ کروڑوں ملازمتیں بچ جائیں اور ملک کی ترقی ہو۔

واضح رہے کہ کورونا لاک ڈاؤن میں مہاجر مزدوروں سے لے کر بے روزگاری تک کے ایشو پر کانگریس لگاتار حکومت کی ناکامیوں کو ظاہر کرنے میں لگی ہوئی ہے۔ اسی کے تحت کانگریس نے ملک بھر میں 'اسپیک اَپ انڈیا' مہم شروع کی ہے۔ کانگریس پارٹی نے فیس بک، ٹوئٹر، یو ٹیوب، انسٹاگرام جیسے مقبول سوشل میڈیا پلیٹ فارم پر ایک ساتھ 50 لاکھ کانگریس کارکنان کو آن لائن جمع کرنے کا ہدف رکھا۔ آن لائن مہم کے ذریعہ کانگریس کسانوں، مزدوروں، چھوٹے تاجروں، غیر منظم سیکٹر کے ملازمین کے ایشو حکومت کے سامنے رکھ رہی ہے ہیں تاکہ حکومت کا دھیان ان کی طرف بھی جائے اور ان کی بھلائی کے لیے حکومت کام کرے۔