چھتیس گڑھ: کسانوں کو ملی خوشخبری، بینک اکاؤنٹس میں 1522 کروڑ روپے کی ادائیگی

وزیر اعلیٰ بھوپیش بگھیل نے کہا کہ راجیو گاندھی جی کے غربت کے خاتمے کے وژن پر عمل کرتے ہوئے غریبوں، کسانوں سمیت تمام طبقات کے لوگوں کے لیے بہت سے فلاحی پروگرام اور اسکیمیں شروع کی گئی ہیں۔

بھوپیش بگھیل، تصویر آئی اے این ایس
بھوپیش بگھیل، تصویر آئی اے این ایس
user

یو این آئی

نئی دہلی: چھتیس گڑھ حکومت نے ایک بار پھر راجیو گاندھی کسان نیا ئے یوجنا کے تحت ایک بار پھر ریاست کے کسانوں کو ایک بڑا تحفہ دیتے ہوئے ان کے بینک کھاتوں میں 1522 کروڑ روپئے ادا کئے گئے ہیں۔ چھتیس گڑھ کے وزیر اعلیٰ بھوپیش بگھیل نے آنجہانی وزیر اعظم راجیو گاندھی کے یوم پیدائش کے موقع پر ریاست کے تقریباً 21 لاکھ کسانوں کے بینک کھاتوں میں 1522 کروڑ روپے کی ادائیگی کی۔ اس موقع پر ’گودھن نیائے یوجنا‘ اس کے تحت گائے پالنے والوں سے خریدے گئے گوبر اور گوٹھان کمیٹیوں اور خواتین سیلف ہیلپ گروپس کو 3 کروڑ 49 لاکھ روپے کی رقم آن لائن منتقل کی گئی۔

اس موقع پر بھوپیش بگھیل نے کہا کہ راجیو گاندھی جی کے غربت کے خاتمے اور چھتیس گڑھ میں ایک خود انحصار ہندوستان کی تعمیر کے وژن پر عمل کرتے ہوئے، ریاستی حکومت نے غریبوں، کسانوں سمیت تمام طبقات کے لوگوں کے لیے بہت سے فلاحی پروگرام اور اسکیمیں شروع کی ہیں۔ قبائلی 'راجیو گاندھی کسان نیائے یوجنا' کاشتکاروں کو ان کی پیداوار کے لیے معقول قیمت فراہم کرنے کے لیے شروع کی گئی ہے۔


حکومت نے خریف سیزن 2021 سے اس اسکیم کا دائرہ کار بڑھایا ہے تاکہ دھان اور دیگر خریف فصلوں کو شامل کیا جا سکے۔ اس کے ساتھ ریاست کے دیہی علاقوں کے بے زمین زرعی مزدوروں کو مالی مدد فراہم کرنے کے لیے راجیو گاندھی گرامین بے زمین زرعی مزدور نیائے یوجنا شروع کی جا رہی ہے۔ اس اسکیم کے تحت دیہی علاقوں کے ایسے خاندانوں کو سالانہ 6000 روپے دیئے جائیں گے، جن کے پاس زرعی زمین نہیں ہے اور وہ منریگا یا زرعی اجرت سے وابستہ ہیں۔

بھوپیش بگھیل نے کہا کہ راجیو گاندھی کسان نیائے یوجنا کے تحت، سال 2020-21 میں ریاست کے تقریباً 21 لاکھ کسانوں کو 5600 کروڑ روپے سے زیادہ کی رقم چار اقساط میں دھان اور گنے کی فصل کی پیداوار کی حوصلہ افزائی مدد کے طور پر دی جا رہی ہے۔ کسانوں کے کھاتے میں پہلی قسط کے طور پر 1525 کروڑ 97 لاکھ روپے ادا کیے گئے۔ دوسری قسط میں ان کے بینک کھاتوں میں 1522 کروڑ تین لاکھ روپے کی رقم منتقل کی گئی۔


قابل ذکر ہے کہ راجیو گاندھی کسان نیائے یوجنا سال 2020 میں نافذ کی گئی ہے جس کا مقصد ریاست میں کسانوں کو مناسب قیمت فراہم کر کے خریف کی فصلوں کی پیداواری صلاحیت اور فصل کے تنوع کو فروغ دینا ہے۔ راجیو گاندھی کسان نیائے یوجنا کے ذریعے ریاست میں زراعت کی حوصلہ افزائی کی گئی ہے۔ پچھلے ڈھائی سالوں میں کسانوں کی تعداد 15 لاکھ سے بڑھ کر 22 لاکھ اور دھان کے زیر کاشت رقبہ 22 لاکھ ہیکٹر سے بڑھ کر 27 لاکھ ہیکٹر ہو گیا ہے۔ جو لوگ زراعت سے منہ موڑ چکے ہیں انہوں نے بھی دوبارہ زراعت میں شمولیت شروع کر دی ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔