یوگی کے خلاف تبصرہ کرنے والوں کے خلاف مقدمہ درج

محمد صدام کے فیس بک پروفائل پر محمد غلام اور راگھویندر نے عتیق احمد کے غیر قانونی تعمیرات کو ڈھائے جانے کے سلسلے میں پوسٹ کیا تھا۔ اسی پوسٹ پر دھیرو یادو نے وزیر اعلیٰ پر قابل اعتراض تبصرہ کیا۔

وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ، یو این آئی 
وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ، یو این آئی 
user

یو این آئی

پریاگ راج: گجرات کے احمد آباد جیل میں قید سابق رکن پارلیمنٹ عتیق احمد کے غیر قانونی تعمیر کو منہدم کیے جانے کے سلسلے میں وزیر اعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ پر قابل اعتراض تبصرہ کرنے والوں کے خلاف تھانے میں مقدمہ درج کیا گیا ہے۔ پولیس ذرائع نے بتایا کہ خلد آباد کے چکیہ واقع عتیق احمد کے گھر کو گزشتہ دنوں پریاگ راج ڈیولپمنٹ اتھارٹی نے منہدم کر دیا تھا۔ محمد صدام کے فیس بک پروفائل پر محمد غلام اور راگھویندر نے عتیق احمد کے غیر قانونی تعمیرات کو ڈھائے جانے کے سلسلے میں پوسٹ کیا تھا۔ اسی پوسٹ پر دھیرو یادو نے وزیر اعلیٰ پر قابل اعتراض تبصرہ کیا۔

انہوں نے بتایا کہ اس تبصرے کا کچھ لوگوں نے اسکرین شاٹ لے لیا اور پھر اسے پرنٹ کروا کر کئی جگہ پھینک دیا۔ اٹالہ چوکی انچارج کا دعویٰ ہے کہ روشن باغ میں گشت کے دروان ایک کاغذ انھیں بھی ملا، جس کی بنیاد پر انہوں نے خلد آباد تھانے میں آئی ٹی ایکٹ سمیت دیگر دفعات کے تحت مقدمہ درج کروایا ہے۔

انہوں نے بتایا کہ اس معاملے میں تین روز قبل مقدمہ درج کروایا گیا تھا اور پولیس ملزم کو ڈھونڈ رہی ہے۔ غور طلب ہے کہ اتھارٹی نے عتیق احمد کے سول لائنس، خلدآباد، دھومن گنج اور جھونسی کے کٹکا میں کئی سو کروڑ روپیے کی غیر قانونی تعمیر کو منہدم کر دیا ہے اور جائداد کو قرق کر لیا ہے۔ اتھارٹی اور پولیس انتظامیہ عتیق کے قریبیوں کے غیر قانونی طور پر تعمیر مکانوں پر بھی بلڈوزر چلوا رہی ہے۔ عتیق اور ان کے اقربا کی کئی غیر قانونی جائدادوں کی شناخت کر لی گئی ہے۔

next