اٹاوہ بلاک پرمکھ انتخاب تشدد: بی جے پی ضلع صدر کے بعد ایس پی سٹی بھی ہٹائے گئے

حادثے والے دن ایس پی نے اعلی افسروں کو واقعہ کی جانکاری دیتے ہوئے بتایا تھا کہ بی جے پی لیڈر ومل بھدوریا کے ساتھیوں نے انہیں تھپڑ مارا ہے اور یہ لوگ لاٹھی، ڈنڈے، بم اور اسلحہ لے کر آئے ہیں۔

علامتی، تصویر آئی اے این ایس
علامتی، تصویر آئی اے این ایس
user

یو این آئی

اٹاوہ: اترپردیش کے ضلع اٹاوہ میں بلاک پرمکھ انتخاب میں ہوئے ہنگامے کی وجہ سے بی جے پی ضلع صدر کو ہٹائے جانے کے بعد سپرنٹنڈنٹ آف پولیس کا بھی تبادلہ کر دیا گیا ہے۔ بلاک پرمکھ انتخاب کے دوران بڑھ پورا میں فائرنگ کے درمیان ایس پی سٹی پرشانت کمار پرساد کو بی جے پی لیڈر ومل بھدوریا نے اس ضمن میں 15 اگست کو بی جے پی ضلع صدر اجے گھاکر کو عہدے سے ہٹا دیا گیا، جبکہ 24 اگست کو ایس پی سٹی کا تبادلہ مظفر نگر میں ایس پی کرائم کے عہدے پر کر دیا گیا۔ ان کی جگہ ہردوئی میں تعینات ایس پی شہر مغربی دیو سنگھ کو ایس پی سٹی اٹاوہ بنایا گیا ہے۔

حادثے والے دن ایس پی نے اعلی افسروں کو واقعہ کی جانکاری دیتے ہوئے بتایا تھا کہ بی جے پی لیڈر ومل بھدوریا کے ساتھیوں نے انہیں تھپڑ مارا ہے اور یہ لوگ لاٹھی، ڈنڈے، بم اور اسلحہ لے کر آئے ہیں۔ اس ویڈیو کے وائرل ہونے کے بعد پوری ریاست میں بی جے پی کے کردار پر سوال اٹھنا شروع ہوگئے تھے۔ اس سے پہلے سماج وادی پارٹی لگاتار یوگی حکومت کے افسروں پر سوال اٹھا رہی تھی۔ کہ پنچایت انتخابات میں اقتدار کے اشارے پر امیدواروں کو ڈرایا دھمکایا جا رہا ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔