مودی حکومت نے ’سب سے پہلے ایمان بیچا، اور اب...‘

کانگریس لیڈر راہل گاندھی نے اپنے ایک ٹوئٹ میں لکھا ہے کہ ’’سب سے پہلے ایمان بیچا اور اب...‘‘، اس کے ساتھ ہی کانگریس لیڈر نے ہیش ٹیگ اِنڈیا آن سیل (ہندوستان برائے فروخت) لگایا ہے۔

راہل گاندھی، تصویر یو این آئی
راہل گاندھی، تصویر یو این آئی
user

قومی آوازبیورو

نئی دہلی: کانگریس کے سابق صدر راہل گاندھی نے بدھ کو قومی مونیٹائزیشن پائپ لائن منصوبہ پر مودی حکومت پر ایک بار پھر شدید حملہ کیا اور کہا کہ قومی مفادات کے تحفظ کی بات کرنے والی یہ حکومت اب اپنا ایمان بیچ چکی ہے۔ راہل گاندھی نے اس سلسلے میں ایک ٹوئٹ کیا ہے جس میں مودی حکومت کا نام تو نہیں لکھا ہے لیکن واضح لفظوں میں یہ ضرور لکھا ہے کہ ’’سب سے پہلے ایمان بیچا اور اب...‘‘۔ اس کے ساتھ ہی کانگریس لیڈر نے ہیش ٹیگ اِنڈیا آن سیل (ہندوستان برائے فروخت) لگایا ہے۔

اس سے قبل منگل کو بھی پارٹی ہیڈ کوارٹر میں ایک پریس کانفرنس کے دوران راہل گاندھی نے مودی حکومت کو اس تعلق سے تنقید کا نشانہ بنایا تھا۔ انھوں نے نجی شعبوں کو ملک کی دولت میں حصہ دار بنانے کے لیے حکومت پر شدید حملہ کیا اور کہا کہ یہ حکومت 70 سال میں حاصل کی گئی ملک کی دولت اپنے کچھ سرمایہ دار دوستوں کو فروخت کر ملک کو تاریکی میں دھکیل رہی ہے۔


کانگریس پارٹی نے اپنے آفیشل ٹوئٹر ہینڈل پر بھی ٹوئٹ کرتے ہوئے حکومت کو اس اسکیم کے تعلق سے تنقید کا نشانہ بنایا تھا اور کہا تھا کہ "قومی مونیٹائزیشن اسکیم کے نام پر قومی تخفیف اسکیم نافذ کی جارہی ہے، قومی اثاثوں کو دوستوں کے حوالے کیا جا رہا ہے۔‘‘

(یو این آئی ان پٹ کے ساتھ)

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔